پاکستان بنیادی انسانی حقوق کولاحق سنگین خطرات کے لحاظ سے چوتھے نمبر پر، رپورٹ

ویب ڈیسک  جمعرات 5 دسمبر 2013
شہریوں کے بنیادی حقوق کو لاحق خطرات کے حوالے سے یہ اعداد و شمار دنیا کے 197 ممالک کے تجزیے کے بعد حاصل کی گی ہیں۔   فوٹو؛فائل

شہریوں کے بنیادی حقوق کو لاحق خطرات کے حوالے سے یہ اعداد و شمار دنیا کے 197 ممالک کے تجزیے کے بعد حاصل کی گی ہیں۔ فوٹو؛فائل

لندن: برطانوی تجزیاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق شہریوں کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزیوں اور انسانوں کو لاحق سنگین خطرات کے لحاظ سے پاکستان کا چوتھا جب کہ شام اس فہرست میں پہلے نمبر پر ہے۔

برطانوی تجزیاتی  اداے میپل کروفٹ کی رپورٹ کے مطابق پاکستان دنیا بھر میں شہریوں کو لاحق بنیادی حقوق کے سنگین خطرات کے حوالے سے چوتھے نمبر پر ہے، جب کہ اس حوالے سے شام پہلے، سوڈان دوسرے اور کانگو تیسرے نمبر پرہے، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پچھلے 5 برسوں میں دنیا میں ایسے ملکوں کی تعداد 20 سے بڑھ کر 34 ہوگئی ہے، جن میں زیادہ تر مشرق وسطی اور افریقہ کے ممالک شامل ہیں۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان میں روایتی انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے علاوہ اب فرقہ وارانہ تصادم انسانی حقوق کےلیے ایک نیا خطرہ بن کر ابھر رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق افغانستان اس فہرست میں چھٹے، چین 15 ویں، بھارت 16 ویں اور بنگلہ دیش 17 ویں نمبر پر ہے، جب کہ ڈنمارک اس فہرست میں 191، ناروے 189، سویڈن 184 اور برطانیہ 165 ویں نمبر پر ہے، رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ شہریوں کے بنیادی حقوق کے حوالے سے اسکینڈینیوین ممالک بہترین ہیں، شہریوں کے بنیادی حقوق کو لاحق خطرات کے حوالے سے یہ اعداد و شمار دنیا کے 197 ممالک کے تجزیے کے بعد حاصل کی گی ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔