کراچی میں ینگ ڈاکٹرز اپنے تحفظ کے لئے سراپا احتجاج

ویب ڈیسک  ہفتہ 30 مئ 2020

 کراچی: سول اسپتال میں ینگ ڈاکٹرز اپنے تحفظ کے لئے سراپا احتجاج بن گئے۔

ایکسپریس نیوزکے مطابق ڈاکٹر رتھ فاؤ سول اسپتال کراچی میں گزشتہ رات گئے کورونا سے جاں بحق ہونے والے مریض کی میت ورثاء کے حوالے نہ کرنے پرلواحقین کی جانب سے ہونے والی ہنگامہ آرائی کے معاملے پر ڈاکٹرز نے او پی ڈیز میں کام عارضی طور پر بند کرکے احتجاج ریکارڈ کرایا۔

اس موقع پر ینگ ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت سرکاری اسپتالوں کے ڈاکٹرز کو تحفظ دینے میں ناکام ہوگئی ہے، گذشتہ روز کرونا کے انتقال کرجانے والے مریض کی لاش مشتعل لواحقین ہمراہ لے گئے جبکہ لواحقین کی جانب سے سول اسپتال کے مرکزی دروازے پر توڑ پھوڑبھی کی گئی، سینکڑوں افراد کا مجمع اسپتال میں گھس کر ڈاکٹرز کو دھمکاتا رہا۔

انکا مزید کہنا تھا کہ ڈاکٹرز کوہراساں کرنے کا سلسلہ اسی طرح جاری رہا تو فرائض ادا کرنا مشکل ہوجائے گا، مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹروں کے تحفظ کے لئے اسپتال کی سیکیورٹی مزید بڑھائی جائے، احتجاجی ڈاکٹرز نے تحفظ دیا جائے کے درج نعروں کے پوسٹراٹھائے نعرے بازی بھی کی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔