سندھ کے تمام بلدیاتی اداروں میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات شروع

اسٹاف رپورٹر  جمعرات 2 جولائ 2020
کراچی میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات سیکریٹری لوکل گورنمنٹ بورڈکے سپرد،انکوائری کمیٹیاں ایک ماہ میں رپورٹ پیش کریں گی۔ فوٹو: فائل

کراچی میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات سیکریٹری لوکل گورنمنٹ بورڈکے سپرد،انکوائری کمیٹیاں ایک ماہ میں رپورٹ پیش کریں گی۔ فوٹو: فائل

کراچی: سندھ کے بلدیاتی اداروں میں بڑے پیمانے پر جعلی بھرتیوں کا انکشاف ہوا ہے۔

سندھ بھر کی یونین کمیٹیز میں مبینہ طور پر جعلسازی سے بھرتیاں کی گئیں، محکمہ بلدیات نے تحقیقات کے لیے کمیٹیاں تشکیل دینے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا جس کے مطابق مبینہ جعل سازی کے ذریعے بھرتی کیے گئے افراد کو قواعد کے برخلاف تنخواہوں کا اجرا بھی کیا جاتا رہا ہے۔

محکمہ بلدیات نے سندھ بھر کی یونین کمیٹیز میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات کے لیے انکوائری کمیٹی قائم کردی ہے ، کراچی ڈویژن میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات سیکریٹری لوکل گورنمنٹ بورڈ کے سپرد کی گئی ہے جبکہ ایڈیشنل سیکریٹری محکمہ بلدیات کو بینظیرآباد ڈویژن میں جعلی بھرتیوں کی تحقیقات کا ہدف دیا کیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق انکوائری کمیٹی یو سیز کے ملازمین کی بھرتیوں کے ریکارڈ اور تنخواہوں کے اجرا کا جائزہ لے گی، 6 ڈویژن کی الگ الگ انکوائری کمیٹیز ایک ماہ میں رپورٹ پیش کریں گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔