پشاور میں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر اندرون شہر خواتین کا بازار سیل

سٹی رپورٹر  جمعرات 2 جولائ 2020
تاجروں کو بار بار ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ضابطہ اخلاق پر عمل کریں لیکن ان پر کوئی اثر نہیں ہو رہا تھا، ڈپٹی کمشنر پشاور ۔ فوٹو : فائل

تاجروں کو بار بار ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ضابطہ اخلاق پر عمل کریں لیکن ان پر کوئی اثر نہیں ہو رہا تھا، ڈپٹی کمشنر پشاور ۔ فوٹو : فائل

 پشاور: ضلعی انتظامیہ نے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر اندرون شہر خواتین کے بازار کریم پورہ کو سیل کردیا۔

ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر سٹی سارہ رحمان نے اندرون شہر ضابطہ اخلاق کی بار بار خلاف ورزی، رش لگانے اور سیفٹی ماسک استعمال نہ کرنے پرکریم پورہ بازار کو سیل کر دیا۔ کریم پورہ بازار کو گھنٹہ گھر چوک سے شادی پیر چوک تک سیل کیا گیا ہے۔

ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کے مطابق کریم پورہ بازارکے تاجروں کو بار بار ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ضابطہ اخلاق پر عمل کریں لیکن ان پر کوئی اثر نہیں ہو رہا تھا جس پر ضلعی انتظامیہ کے افسران نے کارروائی کرتے ہوئے کریم پورہ بازار کو سیل کردیا۔

انہوں نے تاجروں اور عوام کو ہدایت کی کہ وہ گھروں سے باہر نکلتے وقت بازاروں اور دکانوں میں سیفٹی ماسک کا استعمال یقینی بنائیں اور ضابطہ اخلاق پر سختی سے عمل کریں بصورت دیگر قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔