امریکا میں پولیس اہلکار تشدد کے پرانے طریقوں سے باز نہ آئے

ویب ڈیسک  ہفتہ 4 جولائ 2020
امریکا میں سیاہ فام شہری جارج فلائیڈ کی موت کے بعد پولیس محکمے میں اصلاحات متعارف کروائی گئی تھی، فوٹو : فائل

امریکا میں سیاہ فام شہری جارج فلائیڈ کی موت کے بعد پولیس محکمے میں اصلاحات متعارف کروائی گئی تھی، فوٹو : فائل

 واشنگٹن: امریکی ریاست واشنگٹن میں پولیس اہلکار تشدد کے پرانے طریقوں سے باز نہ آئے۔

واشنگٹن میں پولیس اہلکار  پھر 2 مظاہرین کی گردن پر گھٹنے رکھ کر بیٹھ گئے، اس موقع پر مظاہرین کے ساتھیوں نے مداخلت کرکے دونوں افراد کو پولیس تشدد سےبچایا۔ سیاہ فام امریکی شہری جارج فلائیڈ کی موت بھی پولیس کی جانب سے گردن پر گھٹنا رکھنے کے باعث دم گھٹنے سے ہوئی تھی تاہم امریکی پولیس اب بھی وہی طریقہ استعمال کررہی ہے۔

واضح رہے کہ سیاہ فام جارج فلائیڈ کی موت کے بعد امریکا بھر میں پرتشدد احتجاجی مظاہروں کے بعد کئی ریاستوں میں پولیس کے محکمے میں اصلاحات متعارف کروائی گئی تھی لیکن ابھی بھی امریکا بھر میں اس طرح سے واقعات میں کمی نہیں آرہی ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔