تاجروں کو FBR آن لائن نظام میں رجسٹریشن کیلیے مزید 2 ماہ مہلت

ارشاد انصاری  پير 6 جولائ 2020
یہ آخری مہلت، فائدہ نہ اٹھانے والوں کیخلاف یکطرفہ کارروائی کی جائیگی، ایف بی آر (فوٹو: فائل)

یہ آخری مہلت، فائدہ نہ اٹھانے والوں کیخلاف یکطرفہ کارروائی کی جائیگی، ایف بی آر (فوٹو: فائل)

اسلام آباد: ایف بی آرنے ٹیئر ون میں شامل تاجروں کو پوائنٹ آف سیل نصب کر کے آن لائن سسٹم سے منسلک ہونے کیلیے مزید 2ماہ کی مہلت دیدی۔

ایف بی آر کی جانب سے حوصلہ افزا نتائج نہ ملنے کے باعث ڈیڈ لائن میں بار بار توسیع کی جاتی رہی ہے، اس سے قبل 31 مارچ تک مہلت دی گئی جو بڑھا کر پہلے 30 اپریل اور پھر 30 جون تک توسیع کی گئی، اب 31 اگست تک بڑھا دیا گیا ہے تاہم اس کیلئے تاجروں کو 20 اگست تک متعلقہ ریجنل ٹیکس آفس اور لارج ٹیکس پیئر یونٹ کو تحریری طور پر آگاہ کرنا ہوگا، اس حوالے سے باضابطہ طور پر نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا۔ اس سسٹم کے نصب ہونے پر ٹیئر ون میں شامل دکانداروں کی سیل ریئل ٹائم بنیادوں پر مانیٹر ہوسکے گی۔

سینئر افسر نے بتایا کہ دکانداروں کو سسٹم کے ساتھ انٹی گریٹ کرنے میں مشکلات پیش آرہی تھیں، علاوہ ازیں کورونا کے باعث بھی تاجر تنظیموںکی جانب سے ایف بی آر سے کہا جارہا تھا کہ دکانداروں کو مہلت دی جائے۔ اس کے بعد مزید توسیع نہیں کی جائے گی اور جو دکاندار و ریٹیلرز یہ سسٹم نصب نہیں کریں گے ان کے خلاف سیلز ٹیکس ایکٹ 1990 کے تحت یکطرفہ کارروائی کی جائیگی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ایف بی آر کے سسٹم سے منسلک ہونے والے چین سٹورز اور تاجروں کو رعایتی سیلز ٹیکس کی سہولت حاصل ہو گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔