یوٹیلیٹی اسٹورزمیں بے ضابطگیاں، چیئرمین کا استعفے سے انکار

حسیب حنیف  جمعـء 31 جولائ 2020
اگراستعفیٰ دینابھی پڑاتووزیراعظم عمران خان سے ملاقات کرکے انھیں دوںگا،میرے ساتھ پورابورڈ بھی جائے گا،ذوالقرنین علی خان۔ فوٹو: فائل

اگراستعفیٰ دینابھی پڑاتووزیراعظم عمران خان سے ملاقات کرکے انھیں دوںگا،میرے ساتھ پورابورڈ بھی جائے گا،ذوالقرنین علی خان۔ فوٹو: فائل

اسلام آباد: یوٹیلٹی اسٹورز میں بے ضابطگیوں پرچیئرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز نے انکوائری کی ہدایت کر دی ہے۔

چئیرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز ذوالقرنین علی خان نے تسلیم کیا ہے کہ یوٹیلٹی اسٹورز میں آٹے، چینی، گھی کی خریداری میں لمبے ہاتھ مارے گئے ہیں، انھوں نے اس کا ذمے دار ایم ڈی کو قرار دے دیا ہے اورکہا ہے کہ ایک حکومتی شخصیت نے ان سے استعفی دینے کیلئے کہا ہے لیکن میں بطور چیئرمین یوٹیلٹی اسٹورز استعفی نہیں دوں گا، اگراستعفیٰ دینا بھی پڑا تو وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کرکے انھیں دوں گا، میرے ساتھ پورا بورڈ بھی جائے گا۔

ایکسپریس سے گفتگو کرتے ہوئے چئیرمین بورڈ آف ڈائریکٹرز نے کہاکہ ایم ڈی یوٹیلیٹی سٹورزعمر لودھی کام نہیں کرتے،ایم ڈی نے پاسکو سے سستی گندم خرید کر بھی نہیں اٹھائی اور ملوں سے مہنگا آٹا خریدا،جہانگیر ترین سے67 روپے کلو 20 ہزار ٹن چینی خریدنی تھی تاہم 12ہزار ٹن اُٹھوائی ج س کے بعد مارکیٹ سے مہنگی چینی خریدی گئی۔ انھوں نے کہا مجھ پر استعفی دینے کا پریشر ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔