مانانوالہ؛ بیٹی نے قبر کشائی کر کے والد کی میت نکال لی

نمائندہ ایکسپریس  جمعـء 31 جولائ 2020
پولیس نے میت تحویل میں لے لی، بیان حلفی لینے کے بعد جانے کی اجازت دی۔ فوٹو : ایکسپریس ٹریبیون

پولیس نے میت تحویل میں لے لی، بیان حلفی لینے کے بعد جانے کی اجازت دی۔ فوٹو : ایکسپریس ٹریبیون

مانانوالہ: خاتون دو روز قبل فوت ہونے والے والد کی خود ہی قبر کشائی کر کے اس کی میت فیصل آباد لے جا رہی تھی کہ مقامی لوگوں کی نشاندہی پر پولیس نے اسے روک لیا۔

تھانہ صدر فاروق آباد کے گاؤں اعوان بھٹیاں میں 70 سالہ کاشتکار مختار احمد دو روز قبل فوت ہوگیا تھا، اسے اسی گاؤں کے قبرستان میں دفنا دیا گیا، گذشتہ روز اس کی بیٹی فرزانہ بی بی اپنے بیٹے شہزاد کے ہمراہ فیصل آباد سے آئی اور جوڈیشل مجسٹریٹ کی اجازت کے بغیر خود ہی قبر کشائی کروا کر باپ کی میت کفن سمیت نکال لی اور اسے گاڑی میں رکھ کر فیصل آباد لے جا رہی تھی کہ ایک نوجوان نوید احمد نے خود کو مرنے والے کا بیٹا ظاہر کر کے اس کی اطلاع دے دی جس پر تھانہ صدر فاروق آباد پولیس  نے گاڑی کا تعاقب کر کے روک لیا اور میت تحویل میں لے کر تھانہ پہنچا دی۔

پولیس نے خاتون سے بیان حلفی لینے کے بعد میت فیصل آباد لے جانے کی اجازت دے دی ،فرزانہ بی بی نے پولیس کو بتایا کہ وہ مرنے والے کی اکلوتی بیٹی ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔