موٹروے زیادتی کیس؛ مرکزی ملزم عابد کی بیوی نے پولیس کو ابتدائی بیان دے دیا

ویب ڈیسک  جمعرات 17 ستمبر 2020
 بشری بی بی نے عابد کے ساتھ دوسری شادی کی تھی، پولیس ذرائع۔ فوٹو:فائل

بشری بی بی نے عابد کے ساتھ دوسری شادی کی تھی، پولیس ذرائع۔ فوٹو:فائل

لاہور: گجر پورہ زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابد کی اہلیہ بشرٰی نے پولیس کو ابتدائی بیان دے دیا۔

ایکسپریس نیوزکے مطابق پولیس ذرائع نے بتایا ہے کہ موٹروے زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابدعلی کی اہلیہ بشریٰ نے پولیس کو ابتدائی بیان دے دیا ہے اور کہا ہے کہ عابد کہاں ہے مجھے علم نہیں۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: موٹروے کیس کے مرکزی ملزم کا زیادتی کا اعتراف

بشریٰ بی بی کا کہنا ہے کہ واقعہ گجر پورہ کے بعد میں خوف کے مارے گھر سے بھاگ گئی، اور مانگا منڈی کے علاقہ میں روپوش ہوگئی، تاہم میں اور عابد اکٹھے گھر سے نہیں بھاگے وہ کہاں گیا مجھے کچھ پتہ نہیں۔ پولیس کے مطابق تفتیشی ٹیم کی بشریٰ بی بی سے مزید تفتیش جاری ہے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: مرکزی ملزم عابدعلی کانام بلیک لسٹ میں شامل

واضح رہے کہ گزشتہ روز پولیس نے کیس کے مرکزی ملزم عابد کی بیوی بشریٰ بی بی کو گرفتار کیا تھا۔ بشری بی بی قلعہ ستار سنگھ ریڈ میں فرار ہوگئی تھی تاہم اسے مانگا منڈی سے حراست میں لیا گیا، بشری بی بی نے عابد کے ساتھ دوسری شادی کی تھی۔

پس منظر؛

گجر پورہ کے علاقے میں موٹروے پر ایک ہفتے قبل انسانیت سوز واقعہ سامنے آیا تھا جہاں پر مدد کے انتظار میں کھڑی ایک خاتون کو دو افراد نے اس کے بچوں کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنایا تھا اور خاتون سے ایک لاکھ نقدی ، 2 تولے طلائی زیورات، ایک عدد برسلیٹ، گاڑی کا رجسٹریشن کارڈ اور 3 اے ٹی ایم کارڈز لے کر فرار ہو گئے تھے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔