سات ماہ بعد 28 سالہ نوجوان کے معدے سے موبائل فون برآمد

ویب ڈیسک  بدھ 23 ستمبر 2020
نوجوان کا خیال تھا کہ فون نگلتے ہی الٹیاں ہونے پر موبائل باہر آجائے گا، فوٹو : مصری اخبار

نوجوان کا خیال تھا کہ فون نگلتے ہی الٹیاں ہونے پر موبائل باہر آجائے گا، فوٹو : مصری اخبار

قاہرہ: مصر میں 28 سالہ نوجوان نے دوستوں پر رعب جمانے کے لیے مذاق ہی مذاق میں موبائل فون نگل لیا جو سات ماہ تک اس کے پیٹ ہی میں رہا۔ 

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق مصر کے دارالحکومت قاہرہ  کے یونیورسٹی اسپتال میں ماہر ڈاکٹرز کی ٹیم نے 28 سالہ نوجوان کے معدے کا آپریشن کرکے سات ماہ سے موجود موبائل فون نکال لیا۔ یہ آپریشن دو گھنٹے تک جاری رہا۔

ڈاکٹر محمد الجزار کا کہنا تھا کہ خوش قسمتی سے موبائل کی بیٹری معدے میں تحلیل نہیں ہوئی ورنہ بیٹری کے اندر موجود زہر آلود کاربن جسم میں پھیل جاتی اور ہلاکت کا سبب بھی بن سکتی تھی۔

mobile phone in stomach

 

ڈاکٹر محمد الجزار کا مزید کہنا تھا کہ مریض نے یہ موبائل دوستوں پر رعب جمانے کے لیے سات ماہ قبل اس امید پر نگلا تھا کہ الٹی ہونے کی صورت میں موبائل خود باہر آجائے گا لیکن ایسا نہیں ہوا۔

پیٹ میں موبائل فون کے ہونے کے باعث نوجوان کو شدید درد ہونے لگا اور اس نے گھر والوں کو ڈانٹ کے خوف سے کچھ نہیں بتایا لیکن ایمرجنسی میں اسپتال لانے پر اور پیٹ کے ایکسرے سے یہ بات سامنے آگئی۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔