وارنر نے سوان کی ریٹائرمنٹ کو عظیم سانحہ قرار دے دیا

اسپورٹس ڈیسک  بدھ 25 دسمبر 2013
ہم اچھی کرکٹ کھیل رہے اور باکسنگ ڈے ٹیسٹ سے قبل 3-0 سے برتری حاصل کیے ہوئے ہیں۔ فوٹو: فائل

ہم اچھی کرکٹ کھیل رہے اور باکسنگ ڈے ٹیسٹ سے قبل 3-0 سے برتری حاصل کیے ہوئے ہیں۔ فوٹو: فائل

سڈنی: ڈیوڈ وارنر نے انگلش اسپنر گریم سوان کی ریٹائرمنٹ کو عظیم سانحہ قرار دے دیا۔

آسٹریلوی اوپنر نے کہا کہ یہ ناقابل یقین ہے کہ پہلے جوناتھن ٹروٹ انگلینڈ واپس چلے گئے اور اب سوان نے کرکٹ سے کنارہ کشی اختیار کرلی۔ تفصیلات کے مطابق ڈیوڈ وارنر انگلینڈ کے اسپن بولر گریم سوان کی ایشز سیریز کے درمیان ریٹائرمنٹ پر حیران ہیں، انھوں نے کہا کہ ایک طرح سے یہ عجیب واقعہ عظیم سانحہ جیسا ہے، البتہ کریڈٹ ہمیں ہی جاتا ہے، ہم اچھی کرکٹ کھیل رہے اور باکسنگ ڈے ٹیسٹ سے قبل 3-0 سے برتری حاصل کیے ہوئے ہیں۔ رواں برس برمنگھم کے ایک شراب خانے میں رات گئے دھما چوکڑی مچانے والے وارنر کو آسٹریلیا کی انگلینڈ میں ایشز مہم کے آغاز سے قبل ہی جنوبی افریقہ بھیج دیا گیا تھا، جس کے بعد کوچ مکی آرتھر کو ٹیم سے الگ کردیا گیا، اب انگلش کھلاڑیوں کو پریشانی کا سامنا ہے، تین ٹیسٹ میں ہی ٹرافی حوالے کرنے کے ساتھ گریم سوان نے ریٹائرمنٹ لے لی جبکہ دباؤ کا شکار جوناتھن ٹروٹ وطن واپس چلے گئے تھے۔

 photo 7_zps89994351.jpg

سوان کے ساتھ تنازعات کے باوجود وارنر نے کہاکہ ان کے خلاف کھیلنا ایک خصوصی موقع تھا۔ اس سیریز میں سوان کیخلاف وارنر کو زیادہ مشکلات پیش نہیں آئیں اور انھوں نے 205 گیندوں پر 140 رنز اسکور کیے۔ آسٹریلیا کے دائیں ہاتھ سے کھیلنے والے پلیئرز بھی سوان کی بولنگ سے محظوظ ہوئے، اب اگر مونٹی پنیسر کو ٹیم میں شامل کیا گیا تو وارنر اسپن بولنگ کیخلاف ایسی ہی کارکردگی دکھانے کو تیار ہیں ۔ انھوں نے کہاکہ ہمیں گریم سوان کی طرح مونٹی پنیسر کی بھی عزت کرنا ہوگی کیونکہ دونوں ورلڈ کلاس بولرز ہیں، مونٹی کی بھارت میں بولنگ شاندار رہی اور بنیادی طور پر سوان اور انھوں نے مل کر سیریز جیتنے میں مدد دی تھی۔ وارنر نے کہاکہ میں پنیسر کے خلاف بھی گذشتہ تینوں میچز جیسا اپنا جارحانہ انداز برقرار رکھوں گا، انھوں نے کہا کہ قدرتی صلاحیت مجھے ٹیسٹ سے ٹوئنٹی 20 طرز کی کرکٹ میں واپس لے آئے گی ، حالیہ سیریز کے دوران میں نے ایک بگ بیش میچ بھی کھیلا ہے جس میں وارنر نے سڈنی تھنڈر کیلیے 31 گیندوں پر 50 رنز بنائے تھے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔