ایشیا کپ کی بنگلا دیش سے منتقلی کیلئے ایشین کرکٹ کونسل کا متعلقہ بورڈ سے مشاورت کا فیصلہ

ویب ڈیسک  جمعرات 26 دسمبر 2013
بنگلا دیش کی تشویشناک سیاسی صورتحال کے باعث ایشیا کپ منتقل کئے جانے کا امکان ہے۔ فوٹو:فائل

بنگلا دیش کی تشویشناک سیاسی صورتحال کے باعث ایشیا کپ منتقل کئے جانے کا امکان ہے۔ فوٹو:فائل

ڈھاکا: ایشیا کپ کے منتظمین نے بنگلا دیش کی خراب سیاسی صورتحال کے پیش نظر ایونٹ کی  کسی متبادل جگہ منتقل کرنے کے حوالے سے متعلقہ کرکٹ بورڈز سے مشاورت کا فیصلہ کیا ہے۔

ایشین کرکٹ کونسل کے چیف ایگزیکٹیو سید اشرف الحق کا کہنا ہے کہ ایشیا کپ ملتوی نہیں کیا جاسکتا تاہم بنگلا دیش کی تشویشناک سیاسی صورتحال کے باعث متعلقہ کرکٹ بورڈز سے مشاورت کے بعد اسے منتقل کئے جانے کا امکان ہے۔ انہوں نے کہا کہ رواں سال کرکٹ شیڈول مصروف ہے، ایشیا کپ کے بعد ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کی میزبانی بھی بنگلا دیش کو ہی کرنی ہے۔

سید اشرف الحسن نے کہا  کہ 4 جنوری کو کولمبو میں اس حوالے سے اہم اجلاس ہوگا جس میں ایشیا کپ متبادلہ جگہ منتقل کرنے یا نہ کرنے کا حتمی فیصلے کے لئے پاکستان، بھارت، سری لنکا اور بنگلا کرکٹ بورڈ کے سربراہان سے مشاورت کی جائے گی۔

واضح رہے کہ  بنگلا دیش میں ایشیا کرکٹ کپ 24 فروری سے 8 مارچ تک کھیلا جانا ہے تاہم وہاں کی سیاسی بے چینی اور پاکستان کے ساتھ کشیدہ تعلقات کی وجہ سے اس کا انعقاد خطرے میں پڑ گیا ہے ۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔