ٹوئٹر کا کورونا ویکسین کیخلاف افواہیں پھیلانے والے اکاؤنٹس بند کرنے کا فیصلہ

ویب ڈیسک  منگل 2 مارچ 2021
پانچویں گنمراہ کن ٹوئٹ پر اکاؤنٹ مستقل بند ہوجائے گا، فوٹو : فائل

پانچویں گنمراہ کن ٹوئٹ پر اکاؤنٹ مستقل بند ہوجائے گا، فوٹو : فائل

سان فرانسسكو: مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر نے کورونا سے بچاؤ کے ٹیکوں کے خلاف گمراہ کن باتیں پھیلانے والوں کے اکاؤنٹس کو مستقل طور پر بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر نے اعلان کیا ہے کہ کورونا ویکسین کے بارے میں افواہیں پھیلانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی، گمراہ کن ٹوئٹس اور غلط معلومات پھیلانے والوں کے اکاؤنٹس کو مستقل بند کردیا جائے گا۔

اس حوالے سے مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ کی جانب سے ایک طریقہ کار ترتیب دیا گیا ہے جو کورونا ویکسین سے متعلق گمراہ کن ٹوئٹس پر پہلے خبردار کرے گا اور پانچویں گمراہ کن ٹوئٹ پر اکاؤنٹ کو مستقل بند کردے گا۔

ٹوئٹر کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ اقدام ٹوئٹر پر افواہوں کی گردش اور گمراہ کن معلومات کا سدباب کرے گا جو ویب سائٹ کی اعتدال پسندی اور انتہاپسندی کے خلاف وضع پالیسی کے عین مطابق ہے۔

اس اعلان سے پہلے ہی ٹوئٹر نے 8 ہزار 400 سے زیادہ ٹوئٹس کو ہٹا دیا اور دنیا بھر میں COVID-19 انفارمیشن قواعد کی خلاف ورزیوں کے بارے میں 11.5 ملین اکاؤنٹس کو مطلع کیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔