نااہلی درخواستیں؛ الیکشن کمیشن کی فیصل واوڈا کے وکیل کو پیش ہونے کی آخری مہلت

ویب ڈیسک  منگل 15 جون 2021
فیصل واوڈا نے 3 سال ہائی کورٹ میں ضائع کیے پھر استعفیٰ دے کر سینیٹر بن گئے، درخواست گزار کے وکیل کا موقف فوٹو: فائل

فیصل واوڈا نے 3 سال ہائی کورٹ میں ضائع کیے پھر استعفیٰ دے کر سینیٹر بن گئے، درخواست گزار کے وکیل کا موقف فوٹو: فائل

 اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے نااہلی کی درخواستوں پر تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا کے وکیل کو پیش ہونے کا آخری موقع دے دیا۔

الیکشن کمیشن میں ممبر پنجاب الطاف ابراہیم قریشی کی سربراہی میں 3 رکنی کمیشن نے سینیٹر فیصل واوڈا کے خلاف نا اہلی کی درخواستوں پر سماعت کی۔ فیصل واوڈا کے وکیل کراچی میں ہونے کے باعث پیش نہ ہوئے۔

سینیٹر فیصل واوڈا کے خلاف درخواستگزار میاں محمد آصف کے وکیل رشید اے رضوی نے درخواست کی کہ فیصل واوڈا نے 3 سال ہائی کورٹ میں ضائع کیے پھر استعفیٰ دے کر سینیٹر بن گئے، الیکشن کمیشن مناسب سمجھے تو ہماری درخواست کو الیکشن ٹربیونل بھیج دے۔

الیکشن کمیشن نے فیصل واوڈا کے وکیل کو پیش ہونے کے لیے آخری موقع دے دیا، الیکشن کمیشن ممبر پنجاب الطاف ابراہیم نے کہا کہ اس کے بعد الیکشن کمیشن کوئی تاریخ نہیں دے گا، درخواست پر مزید سماعت 8 جولائی کو ہوگی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔