اوورسیز پاکستانی الیکشن کمیشن پہنچ گئے، آئی ووٹنگ قانون پر عملدرآمد کا مطالبہ

اسٹاف رپورٹر  منگل 23 نومبر 2021
الیکشن کمیشن نے آئی ووٹنگ کے حوالہ سے اقدامات میں تاخیر کی تو ملک گیر احتجاج کرینگے، اوورسیز پاکستانی

الیکشن کمیشن نے آئی ووٹنگ کے حوالہ سے اقدامات میں تاخیر کی تو ملک گیر احتجاج کرینگے، اوورسیز پاکستانی

 اسلام آباد: اوورسیز پاکستانی الیکشن کمیشن پہنچ گئے اور آئی ووٹنگ قانون پر عملدرآمد سے متعلق چیف الیکشن کمشنر کے نام یادداشت جمع کرا دی۔

سیکرٹری الیکشن کمیشن نے اوورسیز پاکستانیوں کو 90 دن کے اندر قانون پر عملدرآمد کرانے کی یقین دہانی کرادی ۔

انٹرنیٹ ووٹنگ کے قانون پر عملدرآمد کرانے کے لیے اوورسیز پاکستانی الیکشن کمیشن پہنچے، سمندر پار پاکستانیوں نے آئی ووٹنگ کے قانون پر عملدرآمد کے حوالہ سے یاداشت سیکرٹری الیکشن کمیشن کو جمع کرائی۔

یاداشت کے متن میں کہا گیا ہے کہ الیکشن کمیشن بیرون ملک پاکستانی مشنز کو آئی ووٹنگ کے حوالہ سے اقدامات کرنے کی ہدایات جاری کرے،الیکشن کمیشن کی آئینی ذمہ داری ہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دے اور سے متعلق اقدامات 90 دن کے اندر کرے،اگر الیکشن کمیشن نے آئی ووٹنگ کے حوالہ سے اقدامات میں تاخیر کی تو ملک گیر احتجاج کرینگے۔

بعد ازاں وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تارکین وطن کا دل ہمیشہ پاکستان کیلئے دھڑکتا ہے، اوورسیز پاکستانیوں کی تکالیف کا احساس ہے، ان کے مسائل سے آگاہ ہوں۔

شہباز گل نے مزید کہا کہ اوورسیز ووٹ کا حق مانگیں تو کہا جاتا ہے انہیں سیاست کی سمجھ نہیں، احسن اقبال کہتے ہیں اوورسیز پاکستانی یہاں کے مسائل سے واقف نہیں، وہ اپنے بیٹے کو بیرون ملک سے بلوا کر یہاں الیکشن لڑاتے ہیں، اوورسیز پاکستانی اپنا حق مانگ رہے ہیں۔

چیئرمین اوورسیز پاکستانی شاہد رانجھا کا کہنا تھا کہ ووٹ کا حق دینے پر وزیراعظم کے شکر گزار ہیں، ہمارے ووٹ کے حق پر سیاست کی جا رہی ہے، اوورسیز ووٹرز کو بلدیاتی انتخابات میں سہولت دیں،شاہد رانجھا نے کہا کہ امید ہے الیکشن کمیشن کوئی راستہ ڈھونڈنے میں کامیاب ہوگا، اوورسیز ووٹرز آئندہ انتخابات میں فیصلہ کن کردار ادا کریں گے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔