خیبر پختونخوا حکومت عالمی اداروں کی 598 ارب روپے کی مقروض نکلی

ویب ڈیسک  جمعـء 13 مئ 2022
کے پی حکومت کے لئے گئے قرض سے متعلق دستاویزات صوبائی اسمبلی میں پیش کی گئیں:فوٹو:فائل

کے پی حکومت کے لئے گئے قرض سے متعلق دستاویزات صوبائی اسمبلی میں پیش کی گئیں:فوٹو:فائل

 پشاور: خیبرپختونخوا حکومت کے ذمے عالمی اداروں کے 598 ارب روپے واجب الادا ہیں۔

خیبرپختون خوا اسمبلی میں گزشتہ سال کے دوران حاصل کیے گئے قرض سے متعلق دستاویزات پیش کردی گئیں۔ دستاویزات کے مطابق خیبر پختونخوا کی حکومت نے گزشتہ 4 سال کے دوران 598 ارب روپے کا قرض لیا۔

دستاویزات میں مزید بتایا گیا ہے کہ 30 جون 2021ء تک لیا گیا قرض 294 ارب روپے ہے جبکہ 235 ارب روپے کے مزید قرضے کی بات ہوچکی ہے۔

سب سے زیادہ قرض 120 ارب روپے ٹرانسپورٹ کی مد میں لیا گیا جبکہ معاشی ترقی کے لئے54ارب، توانائی کے منصوبوں کے لئے 23 ارب اورتعلیم کے لئے 10 ارب روپے کا قرض لیا گیا۔

کے پی حکومت نے ایشیائی ترقیاتی بینک،انٹرنیشنل ڈیولپمنٹ ایجنسی سمیت مختلف عالمی اداروں سے قرض لیا۔

صوبائی وزیرخزانہ تیمور سلیم جھگڑا کا کہنا ہے کہ قرض لینا کوئی بری بات نہیں۔حکومت نے عالمی اداروں سے قرضہ ترقیاتی منصوبوں کے لئے لیا اوران قرضوں سے ڈیم اور موٹروے بنایا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔