حکومت اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات آج سے قطر میں شروع ہوں گے

ویب ڈیسک  بدھ 18 مئ 2022
آئی ایم ایف (فوٹو فائل)

آئی ایم ایف (فوٹو فائل)

 اسلام آباد: پاکستان اور بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کے درمیان ساتویں اقتصادی جائزہ مذاکرات آج سے قطر کے دارالحکومت دوحہ میں شروع ہوں گے، جس کے لیے وزارت خزانہ کی ٹیم قطر روانہ گئی ہے۔

وزارت خزانہ کی طرف سے جاری کردہ ٹویٹ میں بتایا گیا کہ خزانہ ڈویژن کی ٹیم آئی ئی ایم ایف کے مشن کے ساتھ مشاورت کے لیے دوحہ روانہ ہو گئی ہے۔

وزارت خزانہ کی جانب سے مزید کہا گیا کہ’اجلاس بدھ سے شروع ہوں گے، آئی ایم ایف سے مذاکرات کامیاب ہونے کی صورت میں پاکستان کا پروگرام ٹریک پر آجائے گا اور پاکستان کو قرضے کی اگلی قسط مل جائے گی‘۔

اعلامیے کے مطابق مذاکرات میں آئی ایم ایف ٹیم کے ساتھ تحریک انصاف کی حکومت کی طرف سے طے کردہ شرائط پر نظر ثانی کے حوالے سے بھی بات چیت کی جائے گی اور آئی ایم ایف سے ریلیف حاصل کرنے کی کوشش کی جائے گی۔

واضح رہے کہ پاکستان میں وزیراعظم شہباز شریف کی حکومت آنے کے بعد پہلی بار مذاکرات پچھلے ماہ اپریل میں ہوئے تھے اور مذاکرات کے بعد وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا تھا کہ انہوں نے حکومت کی جانب سے آئی ایم ایف سے قرض پروگرام کی مالیت اور دورانیہ بڑھانے کی درخواست کی ہے۔

انہوں نے واشنگٹن میں ایک پریس کانفرنس کے دوران یہ دعویٰ بھی کیا تھا کہ آئی ایم ایف ’بڑی حد تک راضی ہوگیا ہے تاہم اب باضابطہ مذاکرات ہونے جارہے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔