’عدم برداشت کا شکار ملک‘ کہنے پر بھارتی شاہ رخ خان پر برس پڑے

ویب ڈیسک  جمعـء 19 اگست 2022
بھارتی انتہا پسندوں اور ناقدین  کی جانب سے   کنگ خان کو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے(فائل فوٹو)

بھارتی انتہا پسندوں اور ناقدین کی جانب سے کنگ خان کو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے(فائل فوٹو)

ممبئی: بالی ووڈ کے کنگ خان نے حال ہی میں ایک انٹرویو کے دوران بھارت کو ایک ’عدم برداشت‘ ریاست کہا  تھاجس پر انہیں تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

دنیا بھر میں موجود مداحوں کے دلوں پر راج کرنے والے بھارتی اداکار شاہ رُخ خان نے حال ہی میں بھارتی نیوز چینل انڈیا ٹوڈے پر گفتگوکی جس میں ان سے بھارت کے ’عدم برداشت ‘ پر سوال کیا گیا۔

صحافی نے کنگ خان سےسوال کیا کہ آپ کے نزدیک کیا بھارت میں عدم برداشت بڑھ رہا ہے یا  بھارت عدم برداشت  ریاست ہے؟

سوال کے جواب میں شاہ رُخ خان نے کہا کہ ’بھارت ایک انتہائی عدم برداشت ریاست ہے  یہا ں عدم برداشت بڑھتا جا رہا ہے۔

شاہ رُخ خان کے اس  متنازعہ بیان ویڈیو سوشل میڈیا  پر تیزی سے وائرل ہو رہی ہے جبکہ بھارتی انتہا پسندوں اور ناقدین  کی جانب سے کنگ خان کو تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔


بھارتی سوشل میڈیا صارفین نے  مختلف سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر شاہ رُخ خان  کی فلم ’ پٹھان‘ کے بائیکاٹ کا مطالبہ کا جس کے بعد ’ہیش ٹیگ بائیکاٹ پٹھان‘‘ سوشل میڈیا پر ٹرینڈ کررہا ہے۔


ایک صارف نے لکھا کہ ’’اگر ہندوستان عدم برداشت کا شکار ملک ہے تو پھر شاہ رُخ خان اب بھی یہاں کیوں رہ رہے ہیں‘‘۔

یاد  رہے کہ شاہ رخ خان کی نئی فلم ‘پٹھان’ 25 جنوری 2023ء کو سنیما گھروں کی زینت بنے گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔