پاکستانی تن ساز نے بھارت کو ہرا کر ایشین باڈی بلڈنگ چمپیئن شپ میں گولڈ میڈل جیت لیا

اسپورٹس رپورٹر  پير 5 ستمبر 2022
گولڈ میڈیل اور پروکارڈ حاصل کرنے کے بعد فدا حسین بلوچ کی تصویر (فوٹو : ٹوئٹر)

گولڈ میڈیل اور پروکارڈ حاصل کرنے کے بعد فدا حسین بلوچ کی تصویر (فوٹو : ٹوئٹر)

 لاہور: واپڈا کے باڈی بلڈر فدا حسین بلوچ نے کرغزستان میں ہونے والی ایشین باڈی بلڈنگ چمپیئن شپ میں پاکستان کے لیے گولڈ میڈل جیت لیا، ساتھ ہی انہوں ںے پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار ”ایلیٹ پرو کارڈ“ بھی جیتا اور مسٹر ایشیا کا ٹائٹل حاصل کیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق کرغزستان کے شہر بشکیک میں منعقدہ ایشین باڈی بلڈنگ چیمپئن شپ میں واپڈا کے باڈی بلڈر فدا حسین نے بھارتی حریف کو شکست دیتے ہوئے 90 کلو گرام کیٹیگری میں یہ میڈل جیتا۔ چمپیئن شپ میں پاکستان سے 10 باڈی بلڈرز 14 مختلف کیٹیگریز میں مقابلہ کر رہے تھے۔

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد خان آفریدی اور ان کی فاؤنڈیشن نے فدا حسین بلوچ کو اس کامیابی پر مبارک باد پیش کی ہے۔

پانچ میڈلز جیتنے والی قومی باڈی بلڈنگ ٹیم واپس پہنچ گئی

دریں اثنا آئی ایف بی بی ایشین چیمپئن شپ میں پانچ میڈلز جیتنے والی قومی باڈی بلڈنگ ٹیم واپس پہنچ گئی۔ چیمپئین شپ میں مسٹر ایشیا (90 کے جی) کا ٹائٹل جیتنے والے مسٹر پاکستان فدا حسین بلوچ اوپن کیٹگری میں بھی سلورمیڈل پانے میں کامیاب رہے۔

جونیئر کیٹیگری میں جونیئر پاکستان گل نوازنے سلور میڈل جیتا جبکہ فیصل خان نے برانز میڈل حاصل کیا۔

استقبالیہ تقریب میں فیڈریشن کے صدر طارق پرویز کا کہنا تھا کہ قومی تن سازوں نے عمدہ کارکردگی پیش کرکے ملک و قوم کا نام فخرسے بلند کردیا، گراں قدر تعاون پر شاہد آفریدی فاؤنڈیشن اور سندھ حکومت کے شکر گزار ہیں، قومی تن ساز عالمی چیمپئین شپ میں بھی شرکت کے ساتھ ملک کے لیے میڈل لانے کے لیے پرعزم ہیں، تن سازی کے فروغ میں پاکستان اسپورٹس بورڈ اپنا کردار ادا کرے۔

واضح رہے کہ واپڈا اسپورٹس بورڈ کے مختلف یونٹوں کے ساتھ ملک بھر سے دو ہزار 200 سے زائد کھلاڑی اور آفیشلز وابستہ ہیں۔ واپڈا کی مختلف کھیلوں میں مجموعی طور پر 65 ٹیمیں ہیں جن میں 36 مردوں اور 29 خواتین کی ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔