سپریم کورٹ؛ جامعہ کراچی کی ہائی کورٹ کے فیصلے کیخلاف درخواست مسترد

اسٹاف رپورٹر  بدھ 28 ستمبر 2022
جامعہ کراچی نے ہائی کورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد رکوانے کی استدعا کی تھی، فوٹو: فائل

جامعہ کراچی نے ہائی کورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد رکوانے کی استدعا کی تھی، فوٹو: فائل

 کراچی: سپریم کورٹ نے جامعہ کراچی کی ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف درخواست کو مسترد کرتے ہوئے فیصلے پر 30 یوم میں عمل درآمد کا حکم دیا ہے۔ 

ایکسپریس نیوز کے مطابق سندھ ہائی کورٹ میں دائر کی گئی آئینی پٹیشن 4597/2019 کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں دائر کی گئی جامعہ کراچی کی درخواست مسترد کردی گئی۔

اسلام آباد رجسٹری میں جسٹس اعجاز الاحسن اور جسٹس سید مظہر علی اکبر نقوی پر مشتمل دو رکنی بنچ نے جامعہ کراچی کی جانب سے دائر کردہ درخواست کی سماعت کی۔

یہ خبر پڑھیں : ہائی کورٹ کا جامعہ کراچی کے رجسٹرار کو اگلی سماعت پر پیش ہونے کا حکم 

جامعہ کراچی کے وکلا نے یونیورسٹی ‘سنیڈیکیٹ” نامکمل ہونے کا جواز پیش کرتے ہوئے ہائی کورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد روکنے کی استدعا کی۔

معزز عدالت نے جامعہ کراچی کی درخواست مسترد کرتے ہوئے سندھ ہائی کورٹ کے 13 مئی 2022 کو سنائے گئے فیصلے پر 30 یوم میں عمل درآمد کا حکم دیدیا۔ جس کے تحت اس مدت کے دوران سینڈیکیٹ مکمل کرکے اجلاس کا انعقاد کرنا ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں : جامعہ کراچی کی وائس چانسلر اور رجسٹرار کو توہین عدالت کا نوٹس 

واضح رہے اسی پٹیشن پر عمل درآمد کے لیے سندھ ہائی کورٹ میں پہلے ہی توہین عدالت کی درخواست پر رجسٹرار جامعہ کراچی کو 7 اکتوبرکو طلب کر رکھا ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔