دی لیجنڈ آف مولا جٹ کے ٹکٹس کی ایڈوانس بکنگ کا اعلان

 بدھ 28 ستمبر 2022
فوٹو انسٹاگرام

فوٹو انسٹاگرام

پاکستانی تاریخ کی مہنگی ترین ایکشن فلم ’دی لیجنڈ آف مولا جٹ‘ کو سینما گھروں میں نمائش کے لیے سب سے زیادہ انتظار کی جانے والی پاکستانی فلموں میں سے ایک قرار دیا جا سکتا ہے۔

بلال لاشاری کی ہدایت کاری میں بننے والی یہ فلم، جسے اکثر اب تک کا سب سے مہنگا پاکستانی پروجیکٹ بتایا جاتا رہا ہے، اس فلم کو تاخیر کے بعد 13 اکتوبر کو سینیما گھروں میں ریلیز کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔

فلم میں اداکار فواد خان نے مولا جٹ کا کردار ادا کیا ہے جب کہ ماہرہ نے ’مکو جٹی‘ کا کردار ادا کیا ہے۔ ریمیک میں حمزہ علی عباسی بھی مولا جٹ کے حریف ’نوری ناتھ‘ کا کردار ادا کریں گے۔

ہدایت کار نے اب اعلان کیا ہے کہ شائقین 30 ستمبر کی شام 7 بجے سے ایڈوانس بکنگ کروا کے ٹکٹ حاصل کر سکتے ہیں۔ (جو سینیما گھروں میں ہی ہوگی۔)


ابتدائی طور پر 2011 میں اعلان ہونے والی اس فلم نے راستے میں کئی رکاوٹیں بھی دیکھی ہیں۔ طویل قانونی جنگ اور کورونا وبا کی وجہ سے بھی ’دی لیجنڈ آف مولا جٹ‘ کسی نہ کسی وجہ سے تاخیر کا شکار ہوتی رہی۔

ہدایت کار بلال لاشاری نے دو سال قبل ایکسپریس ٹریبیون سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا تھا کہ ’فلم ثقافتی اور لسانی تفریق سے بالاتر ہے۔ ایک سندھی بھی اس سے اتنا ہی لطف اندوز ہو گا جتنا کسی بھی پنجابی کو اسے دیکھنے میں مزہ آئے گا‘۔ انہوں نے کہا کہ ’فلم کی کہانی نئی نسل کو متاثر کرے گی، کیونکہ اس کی بدولت ہم مستقبل میں افسانوی کرداروں، مولا اور نوری کی اہمیت کو بڑھا دیں گےکو بڑھا دے گا۔‘‘

دی لیجنڈ آف مولا جٹ میں فارس شفیع، علی عظمت، شفقت چیمہ اور نیئر اعجاز نے بھی اہم کردار ادا کیے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔