عمران خان معافی مانگنے خاتون جج کے پاس پہنچ گئے، ملاقات نہ ہوسکی

ویب ڈیسک  جمعـء 30 ستمبر 2022
سیشن جج زیبا چوہدری کی عدم موجودگی پر عمران خان واپس روانہ ہوگئے:فوٹو:فائل

سیشن جج زیبا چوہدری کی عدم موجودگی پر عمران خان واپس روانہ ہوگئے:فوٹو:فائل

 اسلام آباد: چئیرمین تحریک انصاف ( پی ٹی آئی)  جج زیبا چوہدری سے معذرت کرنے کے لیے عدالت پہنچے تاہم ان کی عدم موجودگی کے باعث واپس روانہ ہوگئے۔

پی ٹی آئی کے چئیرمین عمران خان اپنے وکیل کے ہمراہ ایڈیشنل سیشن جج زیبا چوہدری کی عدالت پہنچے تاہم  معزز جج عدالت میں موجود نہیں تھیں۔

عمران خان نے ریڈر سے کہا کہ  میڈم زیبا کو بتانا کہ عمران خان آیا تھا۔ان  سے معذرت کرنا چاہتا تھا اگر میرے الفاظ سے ان کی دل آزاری ہوئی ہوتو۔ جج زیبا چوہدری کی عدم موجودگی کے باعث عمران خان واپس روانہ ہوگئے۔

اس قبل عمران خان  ایڈیشنل  سیشن جج ظفر اقبال کی عدالت میں پیش ہوئے۔ عدالت نے دفعہ 144 کی خلاف ورزی کے مقدمے میں عمران خان کی ضمانت منظور کرلی۔

جج ظفر اقبال نے استفسار کیا کہ کیا عمران خان پرالزام صرف ایما کا ہے۔ پراسیکیوشن نے ایماء کی حد تک شواہد پیش کرنے ہیں۔کیا ایماء کی حد تک آپ کے پاس کوئی شواہد ہیں؟ عمران خان کے وکیل کا کہنا تھا کہ کہا کہ لفظ ایما صرف لفظ کی حد تک ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔