پارلیمانی پارٹی نے پختونخوا اسمبلی تحلیل کرنیکا اختیار عمران خان کو دے دیا

ویب ڈیسک  ہفتہ 3 دسمبر 2022
عمران خان نے ویڈیو لنک کے ذریعے پارلیمانی پارتی کے اجلاس سے خطاب کیا (فوٹو فائل)

عمران خان نے ویڈیو لنک کے ذریعے پارلیمانی پارتی کے اجلاس سے خطاب کیا (فوٹو فائل)

 پشاور: پشاور: تحریک انصاف کی پارلیمانی پارٹی نے خیبرپختونخوا اسمبلی تحلیل کرنے کا اختیار چیئرمین عمران خان کو دے دیا ہے جب کہ  وزیراعلیٰ محمود خان کا کہنا ہے کہ عمران خان فیصلہ کریں تو 5 منٹ میں اس پر عمل ہوگا ۔

پی ٹی آئی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس وزیر اعلیٰ محمود خان کی زیر صدارت سی ایم ہاؤس میں ہوا، جس سے پارٹی چیئرمین عمران خان نے بذریعہ ویڈیو لنک خطاب کیا۔ اجلاس میں تمام ارکان اسمبلی نے خیبرپختونخوا اسمبلی تحلیل کرنے کا اختیار عمران خان کو دے دیا۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ پختونخوا علی محمود  خان نے عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ یہ آپ کے ارکان اسمبلی ہیں، جو فیصلہ آپ کریں گے، وہی  قبول ہوگا ۔ تمام ارکان اسمبلی نے اپنے استعفے مجھے دے دیے ہیں۔

مزید پڑھیں: حکومت سے مذاکرات ہو ہی نہیں سکتے، عمران خان

انہوں نے کہا کہ میں نے ارکان اسمبلی سے کہا ہے کہ استعفے نہ دیں، جب بھی عمران خان کا حکم ہوا، ہم سب فارغ ہوجائیں گے۔خیبرپختونخوا آپ کا ہے، یہ آپ کا گھر ہے، ہم آپ کے فیصلے کے منتظر ہیں۔جب آپ نے پکارا، ہم آپ کے ساتھ کھڑے ہیں اور  کھڑے رہیں گے۔ حقیقی آزادی کے لیے ہم سب تیار ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔