ایلون مسک 200 ارب ڈالرسے زائد اثاثوں سے محروم ہونے والے پہلے شخص بن گئے

ویب ڈیسک  منگل 10 جنوری 2023
اچار نومبر 2021 کو ایلون مسک کے اثاثے اپنی بلندی پر پہنچے تھے:فوٹو:فائل

اچار نومبر 2021 کو ایلون مسک کے اثاثے اپنی بلندی پر پہنچے تھے:فوٹو:فائل

  واشنگٹن: امریکی ٹائیکون ایلون مسک ایک برس میں 200 بلین ڈالر گنوانے والے پہلے انسان بن گئے۔

ٹیسلا کے سی ای او کو گزشتہ ہفتوں میں کمپنی کے شیئر گرنے کی وجہ سے تاریخ کا سب سے بڑا نقصان برداشت کرنا پڑا ہے۔

ایلون مسک جنوری 2012 میں وہ دوسرے شخص تھے جنہوں نے 200 بلین ڈالر کے ذاتی اثاثے بنائے، اس سے قبل جیف بیروز نے یہ ہندسہ عبور کیا تھا۔

بلوم برگ بلینیئرز انڈیکس کے مطابق 51 سالہ ایلون مسک کے اثاثوں کی کل مالیت اس وقت 137 بلین ہے۔

ایلون مسک کو چند ہفتوں میں ٹیسلا کے شیئر گرنے پر 137 بلین ڈالر کا نقصان اٹھانا پڑا ہے۔

چار نومبر 2021 کو ایلون مسک کے اثاثے اپنی بلندی پر پہنچے تھے اور ان کی مالیت کا تخمینہ 340 بلین ڈالر کیا گیا تھا۔

اثاثے گھٹنے کی وجہ سے دسمبر 2022 میں فرانسیسی ٹائیکون برنارد آغنو نے ان کو پیچھے چھوڑتے ہوئے ان سے دنیا کے امیر ترین شخص ہونے ٹائٹل چھین لیا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔