نگراں وزیراعلیٰ پنجاب کی تقرری کیلیے 6 رکنی پارلیمانی کمیٹی کے قیام کا نوٹی فکیشن جاری

ویب ڈیسک  جمعرات 19 جنوری 2023
(فوٹو: فائل)

(فوٹو: فائل)

 لاہور: اسپیکر پنجاب اسمبلی سطبین خان نے نگراں وزیراعلیٰ کے تقرر کے لیے 6 رکنی پارلیمانی کمیٹی کے قیام کا نوٹی فکیشن جاری کردیا۔

اسپیکر کی جانب سے جاری نوٹی فکیشن کے مطابق کمیٹی میں حکومتی اتحاد اور متحدہ اپوزیشن کے تین تین اراکین شامل ہیں، جن میں سے حکومت بینچوں سے میاں اسلم اقبال، راجہ بشارت اور ہاشم جواں بخت جبکہ متحدہ اپوزیشن کی جانب سے ملک احمد خان، حسن مرتضی اور ملک ندیم کامران شامل ہیں۔

نوٹی فکیشن کے مطابق پارلیمانی کمیٹی 3 روز میں نگراں وزیراعلی کے ناموں پر مشاورت کرے گی۔

تحریک انصاف کی پارلیمانی کمیٹی کے اراکین کی عمران خان سے ملاقات

دوسری جانب پنجاب میں نگران حکومت کے قیام کا معاملے پر تحریک انصاف کی پارلیمانی کمیٹی کے اراکین کی عمران خان سے ملاقات کی، جس میں سینئر مرکزی نائب صدر فواد چوہدری بھی موجود تھے۔

ملاقات میں پنجاب میں نگران وزیراعلیٰ کی نامزدگی کے حوالے سے اہم امور پر تفصیلی مشاورت کی گئی اور احمد نواز سکھیرا، سابق چیف سیکریٹری پنجاب نوید چیمہ اور نصیر خان کے ناموں پر غور کیا گیا۔

چیئرمین تحریک انصاف کی جانب سے حتمی مشاورت کے بعد دو نام پارلیمانی کمیٹی کو بھیجے جانے پر اتفاق کیا۔

انتخابات کی شفافیت کو خطرے میں ڈالنا قوم سے دشمنی ہوگی، عمران خان

اس موقع پر عمران خان نے کہا کہ ملک انتخابات میں تاخیر کا کسی طور متحمل نہیں ہوسکتا، نہایت حسّاس ملکی صورتحال میں انتخابات کی شفافیت کو خطرے میں ڈالنا قوم سے دشمنی کے مترادف ہے، صاف، شفاف انتخابات کا انعقاد سنجیدہ ترین معاملہ ہے، بہترین ساکھ اور صلاحیت کی حامل نگران حکومت ہی اس ذمہ داری کیلئے موزوں ہے۔

انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف بہترین شہرت و صلاحیت کی حامل شخصیات کو نامزد کررہی ہے، عوام کا سامنا کرنے سے خوفزدہ گروہ کو مزید خرابیوں کی اجازت دینا حماقت ہوگی، نگران حکومتوں کے قیام کا آئینی تقاضا سنجیدگی سے پورا کرکے عوام کو انتخاب کے ذریعے فیصلے کا بلاتاخیر حق دیا جائے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔