کوئٹہ سے پشاور جانے والی جعفر ایکسپریس کو دھماکے سے اڑانے کی کوشش

ویب ڈیسک  جمعـء 20 جنوری 2023
پہاڑی علاقہ اور دشوار گزار رستے کی وجہ سے امدادی ٹیموں کو پہنچنے میں مشکلات کا سامنا ہے

پہاڑی علاقہ اور دشوار گزار رستے کی وجہ سے امدادی ٹیموں کو پہنچنے میں مشکلات کا سامنا ہے

 کوئٹہ: بلوچستان کے شہر سبی میں کوئٹہ سے پشاور جانے والی جعفر ایکسپریس کو دھماکے سے اڑانے کی کوشش کی گئی، جس کے نتیجے میں کئی بوگیاں پٹڑی سے اترنے کے باعث متعدد مسافر زخمی ہو گئے۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سبی میں پنیر کے علاقے میں ریلوے ٹریک پر دھماکا ہوا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ کوئٹہ سے پشاور جانے والی جعفر ایکسپریس کی متعدد بوگیاں پٹڑی سے اتر گئیں، جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہو گئے۔ واقعے کی اطلاع ملتے ہی سکیورٹی فورسز اور ریسکیو کی ٹیمیں جائے وقوع کی جانب روانہ ہو گئی ہیں۔

دوسری جانب محکمہ ریلوے کے حکام نے کہا ہے کہ دھماکے کے نتیجے میں ٹرین کے پٹڑی سے اترنے کے بعد مچھ، سبی ریلوے ٹریک پر ٹرینوں کی آمد و رفت معطل ہو گئی ہے۔ ضلع کے تمام اسپتالوں میں ہنگامی حالت نافذ کرکے ڈاکٹروں اور پیرا میڈکس عملے کو الرٹ کردیا گیا ہے۔ پہاڑی علاقہ اور دشوار گزار رستے کی وجہ سے امدادی ٹیموں کو پہنچنے میں مشکلات کا سامنا ہے۔

ڈی سی کچھی آغا سمیع اللہ کے مطابق کوئٹہ سے پشاور جانے والی جعفر ایکسپریس کو دھماکا خیز مواد سے اڑانے کی کوشش کی گئی۔ابتدائی اطلاعات کے مطابق 8 مسافر زخمی ہوئے ہیں  جب کہ انجن سمیت 8 بوگیاں پٹڑی سے اتر گئیں۔

دریں اثنا وزیراعلیٰ بلوچستان عبدالقدوس بزنجو نے جعفر ایکسپریس کو دہشت گردی کا نشانہ بنانے کے واقعی کی مذمت کرتے ہوئے مسافروں کے زخمی ہونے پر افسوس کا اظہار کیا۔ انہوں نے ڈپٹی کمشنر کچھی اور سبی کو فوری طور پر امدادی سرگرمیاں تیز کرنے اور زخمیوں کو اسپتالوں میں علاج معالجے کی بہترین سہولیات فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔