سعودی عرب اور ایران کا سفارت خانے کھولنے کے لیے فوری ملاقات

ویب ڈیسک  جمعرات 23 مارچ 2023
سعودی عرب اور ایران کے وزرائے خارجہ نے ٹیلی فونک گفتگو میں رمضان کی مبارک باد بھی دی : فوٹو: فائل

سعودی عرب اور ایران کے وزرائے خارجہ نے ٹیلی فونک گفتگو میں رمضان کی مبارک باد بھی دی : فوٹو: فائل

ریاض: سعودی عرب کے وزیر خارجہ فیصل بن فرحان نے اپنے ایرانی ہم منصب حسین امیر عبداللہیان کو ٹیلی فون کیا اور رمضان کی آمد پر مبارک باد دی جب کہ دونوں رہنماؤں نے جلد ملاقات پر بھی اتفاق کیا۔ 

سعودی میڈیا کے مطابق وزیر خارجہ فیصل بن فرحان نے ایرانی وزیر خارجہ کو ٹیلی فون کیا۔ گفتگو میں دونوں رہنماؤں نے رمضان کی مبارکباد کا تبادلہ کیا اور فوری ملاقات پر اتفاق کیا۔

دونوں رہنماؤں نے اتفاق کیا کہ 7 سال سے منقطع سفارتی تعلقات کی بحالی کے لیے عرصے سے بند سفارت خانوں اور قونصل خانوں کو کھولنے کے لائحہ عمل کو ترتیب دیا جائے گا۔

یاد رہے کہ 10 مارچ کو چین کی ثالثی میں ہونے والے مذاکرات میں سعودی عرب اور ایران کے درمیان سفارتی تعلقات کی بحالی پر معاہدہ طے پاگیا تھا جس میں فریقین نے سفارت خانوں کو کھولنے پر اتفاق کیا تھا۔

یہ خبر پڑھیں : ایران اور سعودی عرب کا سفارتی تعلقات کی بحالی پر اتفاق 

اس معاہدے کی بنیاد پر توقع ہے کہ ایران اور سعودی عرب دو ماہ کے اندر اپنے سفارت خانے اور مشن دوبارہ کھولیں گے اور 20 سال پرانے دستخط شدہ سیکیورٹی اور اقتصادی تعاون کے معاہدوں پر عمل درآمد کریں گے۔

علاوہ ازیں ایرانی اہلکار نے دعویٰ کیا ہے کہ صدر ابراہیم رئیسی کو سعودی ولی عہد شاہ سلمان کی جانب سے دورے کا دعوت نامہ موصول ہوا ہے تاہم سعودی عرب نے ابھی تک اس کی تصدیق نہیں کی۔

واضح رہے کہ سعودی عرب اور ایران کے درمیان جوہری سرگرمیوں پر سخت اختلاف ہے تاہم چین کی ثالثی میں دونوں ممالک کے درمیان معاملات حل ہوتے نظر آرہے ہیں۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔