پاکستان ترکیہ سے مل کر ففتھ جنریشن لڑاکا طیارے تیار کرے گا

آئی این پی  اتوار 25 جون 2023
امریکی ساختہ انجن استعمال لیکن اعتراض پر برطانوی انجن کا آپشن موجود۔ فوٹو: بی اے آئی

امریکی ساختہ انجن استعمال لیکن اعتراض پر برطانوی انجن کا آپشن موجود۔ فوٹو: بی اے آئی

اسلام آباد: پاکستان نے ففتھ جنریشن لڑاکا طیاروں کی تیاری کے میدان میں قدم رکھ دیا، پاکستان ترکیہ کے ساتھ مل کر ففتھ جنریشن سٹیلتھ ایئر سپیرٹی فائٹر طیارے تیار کریگا۔

پاکستان ترک ایرو اسپیس انڈسٹری کے ’’خان‘‘ طیارے کے پروگرام کا حصہ بن گیا، پاکستان ترکی کے ساتھ مل کر جدید ٹوئن انجن ففتھ جنریشن طیارے تیار کرے گا۔

ترک ایرو سپیس انڈسٹری نے 2010 میں ففتھ جنریشن طیارے کی تیاری کے پروگرام کا آغاز کیا تھا، ترکی کے ’’ٹی ایف ایکس‘‘ طیارے نے رواں برس اپنی پہلی ٹیکسی کی تھی، ٹی ایف ایکس طیارے کی پہلی باضابطہ پرواز رواں برس کے آخر میں متوقع ہے، پاک فضائیہ میں پہلا ففتھ جنریشن طیارہ 2030 میں شامل کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں: ترکی نے اپنا پہلا طیارہ بردار بحری جہاز لانچ کردیا

طیارے میں امریکی ساختہ جنرل الیکٹرک ایف ون ٹین انجن استعمال کئے جائیں گے، امریکا کے اعتراض کی صورت میں پاکستان کے پاس برطانوی ساختہ رولز رائس انجن کا آپشن بھی موجود ہے۔

ترک کمپنی برطانیہ کی رولز رائس کمپنی کے ساتھ مل کر نئے انجن کی تیاری پر بھی کام کر رہی ہے، پاک ترک ففتھ جنریشن طیارہ 21 میٹر طویل اور اس کے پروں کا پھیلاؤ 14 میٹر تک ہو گا، طیارے کا ٹیک آف وزن 27 ہزار 215 کلو گرام جبکہ طیارے کی زیادہ سے زیادہ رفتار ملک 1.8 جبکہ کومبیٹ رینج 1100 کلومیٹر ہو گی۔

طیارے پر فضا سے فضا میں مار کرنے والے بی وی آر میزائلز کے ساتھ فضا سے زمین پر مار کرنے والے کروز میزائل بھی نصب کئے جائیں گے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔