اوورز مکمل کرنے کیلیے قانون میں لچک لانے کا مطالبہ

اسپورٹس رپورٹر  پير 31 جولائی 2023
آئی سی سی سے بات کرتے ہوئے دلیل پر قائل کرنے کی کوشش ہوگی،انگلش بورڈ۔ فوٹو:فائل

آئی سی سی سے بات کرتے ہوئے دلیل پر قائل کرنے کی کوشش ہوگی،انگلش بورڈ۔ فوٹو:فائل

 لاہور: اولڈ ٹریفورڈ ٹیسٹ میں جیت کا موقع ہاتھ سے نکلنے پر انگلینڈ کی مایوسی کم نہ ہوئی، دن کے کھیل میں اوورز مکمل کرنے کیلیے قانون میں لچک لانے کا مطالبہ کردیا۔

مانچسٹر کے اولڈ ٹریفورڈ گراؤنڈ پر کھیلے جانے والے سیریز کے چوتھے ٹیسٹ میں جیت میزبان انگلینڈ کی ایشز واپس لانے کی امیدیں برقرار رہتیں، اس کا روشن امکان بھی نظر آرہا تھا، آسٹریلیا کی 5وکٹیں باقی تھیں مگر میچ بارش کی وجہ سے ڈرا ہوگیا۔

انگلش بیٹر جو روٹ کے مطابق روشنی کا کوئی مسئلہ نہیں تھا، دن کے تمام اوورز مکمل ہونے تک کھیل جاری رہنا چاہیے تھا،اس سے پہلے کے دنوں میں بھی موقع ہونے کے باوجود 15اوورز کم کروائے گئے۔

یہ بھی پڑھیں: اسٹیورٹ براڈ کا کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان

چیئرمین انگلش کرکٹ بورڈ رچرڈ تھامپسن نے کہا کہ کھیل کے شیڈول میں لچک پیدا کرنے کے حوالے سے میں چیئرمین آئی سی سی گریگ بارکلے سے بات کروں گا، انگلینڈ نے کھیلنے کا انداز بدلتے ہوئے ٹیسٹ فارمیٹ کی ساکھ بہتر بنانے میں اہم کردار ادا کیا ہے،اب شائقین اس فارمیٹ میں زیادہ دلچسپی کا مظاہرہ کرتے اور پْرجوش نظر آتے ہیں،اولڈ ٹریفورڈ ٹیسٹ کی صورتحال کو سامنے رکھتے ہوئے دن کا کھیل مکمل کرنے کے حوالے سے بات کرنے کی ضرورت ہے۔

انھوں نے کہا کہ ریزرو ڈے نہیں تو کم ازکم اگر حالات اجازت دیں تو اوورز پورے کروانے میں کوئی حرج نہیں ہونا چاہیے،یہ پالیسی صرف انگلینڈ نہیں بلکہ تمام ٹیموں کیلیے ہوگی،کھلاڑیوں اور شائقین کو مایوس کن صورتحال سے بچانے کیلیے اگر کوئی راست قدم اٹھایا جائے تو کھیل کے مفاد میں بہتر ہوگا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔