بھارت سکھ رہنما کے قتل میں را کے ملوث ہونے پر تحقیقات میں کینیڈا سے تعاون کرے؛ امریکا

ویب ڈیسک  جمعـء 29 ستمبر 2023
کینیڈا میں سکھ رہنما کے قتل میں بھارتی خفیہ ایجنسی ملوث تھی، جسٹن ٹروڈو

کینیڈا میں سکھ رہنما کے قتل میں بھارتی خفیہ ایجنسی ملوث تھی، جسٹن ٹروڈو

 واشنگٹن: کینیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو کی جانب سے خالصتان تحریک کے متحرک سکھ رہنما کے قتل کے پیچھے بھارتی خفیہ ایجنسی را کے ملوث ہونے کے شواہد پیش کرنے کے بعد مودی سرکار کے گرد گھیرا تنگ ہوتا جا رہا ہے اور اب امریکا نے بھی یہ معاملہ براہ راست انڈین گورنمنٹ کے سامنے اُٹھایا ہے۔ 

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی وزارت خارجہ کے حکام نے کہا ہے کہ وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے اپنے بھارتی ہم منصب جے شنکر کے ساتھ گفتگو میں سکھ  رہنما کے قتل کا معاملہ اٹھا دیا۔

امریکی وزارت خارجہ کے حکام نے مزید بتایا کہ وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے بھارتی وزیر خارجہ سبرامنیم جے شنکر سے ملاقات میں زور دیا کہ سکھ رہنما کے قتل کی تحقیقات میں کینیڈی حکومت کے ساتھ تعاون کرے۔

بھارتی وزیر خارجہ سبرامنیم جے شنکر امریکا پہنچے ہیں جہاں انھوں نے اپنی امریکی ہم منصب انٹونی بلنکن سے سمیت امریکی مشیر قومی سلامتی کونسل سے بھی ملاقات کی۔

یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے کینیڈا کے وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے قتل میں بھارتی خفیہ ایجنسی را کے ملوث ہونے کے شواہد پیش کیے تھے۔ دوسری جانب بھارت نے کینیڈا کے الزامات کو مضحکہ خیز قرار دیتے ہوئے مسترد کردیا تھا۔

جس کے بعد دونوں ممالک نے ایک دوسرے کے سفارت کاروں کو ملک بدر کردیا تھا اور تاحال دونوں کے تعلقات کشیدہ ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔