اسرائیل کا نام لیکرمذمت نہ کرنے پر ماہرہ خان تنقید کی زد میں

ویب ڈیسک  جمعـء 20 اکتوبر 2023
ماہرہ خان اسرائیل کا نام لینے پر شدید تنقید کی زد میں آگئیں: فوٹو ویب ڈیسک

ماہرہ خان اسرائیل کا نام لینے پر شدید تنقید کی زد میں آگئیں: فوٹو ویب ڈیسک

  کراچی: سُپر اسٹار ماہرہ خان کو اپنے پیغام میں اسرائیل کا نام نہ لینے پر سوشل میڈیا پر شدید تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

ماہرہ خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ایکس (سابق ٹوئٹر) پر ایک پیغام جاری کیا جس میں اُنہوں نے کہا کہ ‘میں ان تمام لوگوں کے لیے دُعاگو ہوں، جنہوں نے اپنے معصوم بچوں اور اپنے اہلخانہ کو کھو دیا ہے، جو بےگھر ہوگئے ہیں، جو ہر لمحہ تکلیف میں گزار رہے ہیں’۔

اداکارہ نے مزید کہا کہ ‘میں اُن لوگوں کے لیے بھی دُعاگو ہوں جو اپنے اردگرد کے مصائب کے بارے میں لاعلم ہیں اور غلط معلومات پر یقین رکھتے ہیں’۔

اس ٹوئٹ کے بعد ماہرہ خان شدید تنقید کی زد میں آگئی ہیں کیونکہ اُنہوں نے اپنے ٹوئٹ میں سفاک اسرائیل کا نام نہیں لیا اور نہ ہی مظلوم فلسطین کا نام لیکر دُعا کی۔

مزید پڑھیں: فلسطین کی حمایت پر ماہرہ خان کا انسٹاگرام اکاؤنٹ “شیڈوبین” ہوگیا

ماہرہ خان کے ٹوئٹ پر ردعمل دیتے ہوئے ایک صارف نے کہا کہ ‘ماہرہ اپنے مستقبل کے ہالی ووڈ معاہدے کو خطرے میں نہیں ڈال سکتیں، اسی لیے انہوں نے اسرائیل کا نام نہیں لیا’۔

صارف نے ماہرہ خان پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ ‘مجبوریاں ہوتی ہیں’۔

https://twitter.com/TheMahiraKhan/status/1715310577869083025

ماہرہ خان نے صارف کو جواب دیتے ہوئے کہا کہ ‘میں حق کے لیے اپنی آواز بلند کرتی ہوں، تم بیٹھ کر اپنا وقت فلسطین کے لیے دُعا میں استعمال کرو’۔

ایکس صارفین نے اداکارہ پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ‘ماہرہ خان شاید اسرائیل کا نام لکھنا بھول گئی ہیں یا پھر ہم اندھے ہوگئے ہیں جو ہمیں اسرائیل کا نام نظر نہیں آرہا’۔

یاد رہے کہ فلسطین کی حمایت کرنے پر ماہرہ خان کا آفیشل انسٹاگرام ہینڈل “شیڈوبین” ہوگیا ہے، میٹا کی سوشل میڈیا ایپ انسٹاگرام فلسطین کے حق میں بولنے والے اکاؤنٹس کو “شیڈوبین” (shadow banned) کرنے لگ گیا ہے، اب تک انسٹاگرام پر کئی اکاؤنٹس کو “شیڈوبین” کردیا گیا ہے جن میں اب معروف اداکارہ ماہرہ خان بھی شامل ہوگئی ہیں۔

ماہرہ خان نے انسٹاگرام پر غزہ کے معصوم بچوں سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے پوسٹ شیئر کی تھی جس کی وجہ سے اُن کا اکاؤنٹ شیڈوبین کیا گیا۔

مزید پڑھیں: ‘آج فلسطین ہے، کل ہم بھی ہوسکتے ہیں': زارا نور عباس

واضح رہے کہ غزہ کے الاحلی اسپتال پر اسرائیلی فضائی حملے میں معصوم فلسطینیوں کی شہادت کے بعد دنیا بھر میں شدید غم و غصہ ہے اور صیہونی فوج کے بھیانک و انسانیت سوز جنگی جرم کی شدید مذمت کی جارہی ہے۔

مزید پڑھیں: ماہرہ خان بھی فلسطین کے حق میں بول پڑیں

غزہ میں اسرائیلی فورسز کی بدترین اور وحشیانہ کارروائیوں میں شہید ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 3700 تک پہنچ گئی ہے، جن میں ایک ہزار سے زائد بچے بھی شامل ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔