بجلی کمپنیوں کے افسران کی مفت بجلی ختم، بدلے میں بڑی رقم ملے گی

ویب ڈیسک  بدھ 6 دسمبر 2023
وزارت توانائی نے آفس میمورینڈم جاری کر دیا۔

وزارت توانائی نے آفس میمورینڈم جاری کر دیا۔

 اسلام آباد: ڈسکوز (بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں) اور پیداواری کمپنیوں کے افسران کی مفت بجلی کی سہولت ختم کردی گئی۔

وزارت توانائی نے حکومتی فیصلے کی روشنی میں آفس میمورینڈم جاری کر دیا۔ گریڈ 17 اور اس سے اوپر کے افسران کو مفت یونٹس کی بجائے رقم ملے گی.

گریڈ 17کے افسر کو 450ماہانہ مفت یونٹس کی بجائے 15 ہزار 858 روپے ملیں گے۔ گریڈ 18کے افسر کو ماہانہ600 مفت یونٹس کی بجائے 21 ہزار 996روپے ملیں گے۔

گریڈ 19کے افسر کو ماہانہ880 مفت یونٹس کی بجائے37 ہزار 594 روپےملیں گے۔ گریڈ20کے افسرکو 1100یونٹس کی بجائے 46 ہزار992 روپے ملیں گے۔

گریڈ21 کے افسر کو 1300مفت یونٹس کی بجائے ماہانہ 55 ہزار536 روپے ملیں گے،

بجلی پیداکرنے والی جنریشن کمپنیوں کے گریڈ 17کے افسران کے بھی ماہانہ 650 یونٹس کی سہولت ختم کردی گئی۔ انہیں 24ہزار 570 روپے ملیں گے۔ گریڈ 18کے افسر کو ماہانہ 700 یونٹس کی بجائے 26 ہزار 460روپے ملیں گے۔

جینکوز کے گریڈ 19 کے افسر کو ماہانہ1ہزار مفت یونٹس کی بجائے 42 ہزار720 روپے ملیں گے۔ گریڈ 20کے افسر کو ماہانہ 1100یونٹس کی بجائے 46 ہزار 992 روپے ملیں گے۔

گریڈ 21کے افسر کو 1300یونٹس ماہانہ کی بجائے 55 ہزار 536 روپے ملیں گے۔

افسران کیلئے یونٹس کی بجائے رقم کی منظوری کابینہ کی توانائی کمیٹی نے پہلے دی تھی۔ فیصلے کی توثیق وفاقی کابینہ سے بھی لی گئی تھی اب باضابطہ عملدرآمد ہوگا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔