مسجد الحرام میں پانی کے کین اور بیگ لے جانے پر پابندی عائد

ویب ڈیسک  پير 12 فروری 2024
پابندی کا مقصد طواف اور سعی کے دوران سہولت فراہم کرنا ہے، انتظامیہ:فوٹو:فائل

پابندی کا مقصد طواف اور سعی کے دوران سہولت فراہم کرنا ہے، انتظامیہ:فوٹو:فائل

مکہ مکرمہ: مسجد الحرام میں پانی کے کین اور بیگ لے جانے پر پابندی عائد کردی گئی۔

مسجد الحرام کی انتظامیہ کے مطابق عمرہ زرائرین کو ہرممکن آرام اور سہولت فراہم کرنا چاہتے ہیں۔ بعض زائرین اپنے ساتھ بڑے بیگز اور پانی کی کین لاتے ہیں جس سے دوسروں کو دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ پابندی کا مقصد دیگرزائرین کو پریشانی سے بچانا ہے۔

مسجد الحرام کے دروازوں کے نگراں سیف السلمی کے مطابق حرم شریف کے دروازوں پر متعین اہلکاروں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ کسی بھی ایسے شخص کو مسجد الحرام میں داخل نہ ہونے دیں جن کے ساتھ پانی کے کین یا بڑے سفری بیگ ہوں۔

اس سے قبل بھی یہ پابندی عائد کی گئی تھی جس کا بنیادی مقصد حرم شریف میں طواف و سعی کے دوران لوگوں کو سہولت فراہم کرنا ہے۔ بعض زائرین بڑے تھیلے یا بیگ اپنے ساتھ حرم شریف کے اندر لے جانے کی کوشش کرتے ہیں جس کی وجہ سے طواف اور سعی کرنے والے دیگر لوگوں کو مشکل ۔ بعض افراد اپنا سامان راہداریوں میں رکھ دیتے ہیں جس کی وجہ سے راستہ بند ہوجاتا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔