بی جے پی کا رہنما نابالغ بچیوں کے جسم فروشی کا اڈہ چلانے پر گرفتار

ویب ڈیسک  جمعـء 23 فروری 2024
مغربی بنگال میں آل انڈیا تریمانول کانگریس کے رہنما بھی جنسی ہراسانی کے مقدمے میں روپوش ہیں، فوٹو: فائل

مغربی بنگال میں آل انڈیا تریمانول کانگریس کے رہنما بھی جنسی ہراسانی کے مقدمے میں روپوش ہیں، فوٹو: فائل

کلکتہ: مغربی بنگال کے بی جے پی رہنما سبیاساچی گھوش کو جسم فروشی کا ریکٹ چلانے کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق مغربی بنگال کے ضلع سندیشکھلی میں حکمراں جماعت آل انڈیا ترینامول کانگریس کے طاقتور رہنما شیخ شاہجہان اور ان کے ساتھیوں پر جنسی زیادتی اور ہراسانی کے الزامات کے دوران پولیس نے مودی کی جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما سبیاساچی گھوش کو حراست میں لے لیا۔

مغربی بنگال کے بی جے پی کے لیڈر سبیاساچی گھوش پر بھی مبینہ طور پر ایک ہوٹل میں نابالغ لڑکیوں کے جسم فروشی کا اڈہ چلانے کا الزام ہے۔ اس گرفتاری کے بعد حکمراں جماعت نے بی جے پی پر تنقید کے نشتر چلا دیئے۔

اس سے قبل خواتین کے ساتھ جنسی ہراسانی کے واقعات میں آل انڈیا ترینامول کانگریس کے رہنما شیخ شاہجہاں کے ملوث ہونے پر قائد ممتا بنرجی پر بی جے پی الزامات کے تیر برسا رہی تھی اور اب معاملہ الٹ ہوگیا۔

ادھر بی جے پی کی خواتین کارکنان نے شیخ شاہجہاں کے خلاف مہم چلانے کے لیے سندیشکھلی میں داخل ہونے کی کوشش کی جسے پولیس نے سرکاری احکامات کے تحت سیکیورٹی کے نام پر ناکام بنادیا۔

دوسری جانب نیشنل ہیومن رائٹس کمیشن کی ایک ٹیم بھی آج سندیشکھلی پہنچی ہے تاکہ وہاں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کے الزامات کی تحقیقات کر کے حقائق کا پتا چلا سکے۔

یاد رہے کہ مغربی بنگال کی حکمراں جماعت کے رہنما شیخ شاہجہان جنسی زیادتی کے الزامات سامنے آنے کے بعد سے روپوش ہیں جب کہ ان کے دو ساتھیوں کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔