بجلی بلوں میں زائد یونٹ ڈالنے والا واپڈا ملازم ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے

ویب ڈیسک  پير 15 اپريل 2024
(فوٹو : فائل)

(فوٹو : فائل)

 لاہور: بجلی کے بلوں میں زائد یونٹ ڈالنے والا واپڈا کا ملازم (ایکس ای این ) جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کردیا گیا۔

شہریوں کو بجلی کے بلوں میں زائد یونٹس ڈالنے کے مقدمے کی سماعت ضلع کچہری لاہور میں ہوئی، جس کی سماعت کرتے ہوئے عدالت نے ایکس ای این واپڈا باغبان پورہ کو 4 روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کردیا ۔

واضح رہےکہ ایف آئی اے لاہور نے ملزم رب یار کو گرفتار کرکے عدالت میں پیش کیا تھا، جہاں چوہدری سجاد ایڈووکیٹ پیش ہوئے۔ جوڈیشل مجسٹریٹ رضوان احمد نے سماعت کے بعد جسمانی ریمانڈ کی درخواست کا تحریری حکم جاری کردیا۔

عدالت نے تحریری حکم میں کہا کہ سرکاری وکیل کے مطابق ملزم رب یار نے 2021 اور 2022 میں بجلی کے زائد یونٹس ڈالے۔ جو شہری 100 یونٹس سے کم استعمال کرتے تھے، ان کو بھی 6، 6 سو یونٹس ڈالے گئے۔ ایف آئی اے نے ملزم سے تفتیش کے لیے 14 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔