کراچی؛ ڈاکو بکروں سے لدا ٹرک اور شہری سے 20 لاکھ لوٹ کر فرار

اسٹاف رپورٹر  جمعـء 14 جون 2024
فوٹو: فائل

فوٹو: فائل

  کراچی:  ڈسٹرکٹ ملیر میں لوٹ مار کی وارداتوں میں ڈاکو لاکھوں روپے مالیت کے بکروں سے لدا ٹرک اور شہری سے 20 لاکھ روپے نقد چھین کر فرار ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق سکھن کے علاقے میں کار سوار مسلح ڈاکوؤں نے بیورپاری کے لاکھوں روپے مالیت کے 65 بکروں سے بھرا ٹرک چھین لیا ، پولیس نے چھینے جانے والا ٹرک لاوارث حالت میں برآمد کرلیا۔

تھرپار کے رہائشی متاثرہ بیوپاری رضا اللہ نے سکھن تھانے میں رپورٹ درج کرا دی جس میں اس نے بتایا ہے کہ وہ مویشیوں کا کاروبار کرتا ہے اور رواں ماہ 10 جون کو قربانی کے بکرے فروخت کرنے لیے بھینس کالونی مویشی منڈی آیا تھا۔

بیوپاری نے مزید بتایا کہ 13 جون کو میرے بھائی نے تھرپارکر سے قربانی کے مزید 65 بکرے ٹرک میں لوڈ کرانے کے بعد ڈرائیور ظفر سمیت دیگر افراد کے ہمراہ روانہ کیے تھے۔

بکروں کا ٹرک جمعرات کی رات سوا تین بجے کے قریب پورٹ قاسم انڈسٹریل ایریا مہران ہائی وے روڈ نزد مکی شاہ درگاہ پہنچا تو سفید رنگ کی کار میں سوار 5 ڈاکوؤں نے ان کی گاڑی کو سائیڈ دے کر رکوایا جس میں سے 2 کے پاس اسلحہ تھا اور انھوں نے ڈرائیور سمیت دیگر افراد کو اتار کر گاڑی میں بٹھا لیا اور ایک شخص بکروں کا ٹرک لے کر وہاں سے چلا گیا۔

اس دوران  کار میں سوار ڈاکو دونوں ڈرائیوروں اور مزدور کو گھماتے رہے اور پورٹ قاسم جنگل کے قریب صبح پانچ بجے کے قریب انھیں چھوڑ کرفرار ہوگئے جبکہ ڈاکوؤں نے ڈرائیوروں اور مزدور سے لوٹ کے دوران نقدی ، موبائل فون ، ڈرائیونگ لائسنس ، اے ٹی ایم اور شناختی کارڈ سمیت دیگر اشیا بھی چھین لیں۔

دریں اثنا اسٹیل ٹاؤن کے علاقے گلشن حدید فیز 2 میں موٹر سائیکل سوار ڈاکوؤں نے عرفان نامی شہری سے 20 لاکھ روپے چھین لیے اور موقع سے فرار ہوگئے۔

اس حوالے سے ایس ایچ او غلام حسین پیرزادہ نے بتایا کہ متاثرہ شہری عرفان گاڑیوں خرید و فروخت اور پولٹری کا کاروبار کرتا ہے ، متاثرہ شہری نے پولیس کو بتایا کہ ایک گاڑی کی قیمت ادا کرنے کے لیے وہ جمعہ کی دوپہر نجی بینک سے 20 لاکھ روپے لے کر نکلا تھا کہ ڈاکو لوٹ کر فرار ہوگئے، پولیس نے واردات کا مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔