اونٹ کیوجہ سے اگر گورنر شپ جاتی ہے تو جائے، گورنر ٹیسوری کا اصل مجرموں کیخلاف کارروائی کا مطالبہ

ویب ڈیسک  منگل 18 جون 2024
فوٹو اسکرین گریپ

فوٹو اسکرین گریپ

  کراچی: گورنر سندھ کامران خان ٹیسوری نے سانگھڑ میں وڈیرے کی بربریت کا شکار ہونے والے اونٹنی کو دیکھنے شیلٹر ہوم کا دورہ کیا اور بلاول بھٹو سے اصل مجرموں کو گرفت میں لانے کا مطالبہ کردیا۔

کراچی میں شیلٹر ہوم میں اوٹنی کی دیکھ بھال کا جائزہ لینے کے بعد گورنر سندھ نے اتنظامات پر اطمینان اور منتظمین کا شکریہ ادا کیا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ بلاول بھٹو کی ہدایت پر اوٹنی کو یہاں لایا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ میں سندھ حکومت اور بلاول بھٹو سے کہوں گا کہ وہ اصل مجرموں کو بے نقاب کر کے قرار واقعی سزا دے، اگر اسلامی اعتبار کے بات کی جائے تو پھر آنکھ کے بدلے آنکھ اور ٹانگ کے بدلے ٹانگ ہے۔

گورنر سندھ نے کہا کہ اگر اوٹنی کے ساتھ ظلم کرنے والے کو ہم اگر سزا نہیں دیتے تو پھر آئندہ کوئی بھی شخص کھڑا ہوکر یہ گھناؤنا کام کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس اوٹنی پر ہونے والے ظلم پر میں اللہ تعالی سے معافی کا طلب گار ہوں۔

انہوں نے کہا کہ اس ظلم پر ہمیں سیاسی مصلحت کی وجہ سے خاموشی اختیار نہیں کرنی چاہیے، ظلم کرنے یا ظالم کا ساتھ دینے والوں پر اللہ کا جو عذاب آیا اُس کا ذکر اور تاریخ موجود ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ ابھی تک اوٹنی کے ساتھ ظلم کرنے والے اصل مجرم پکڑے نہیں گئے، بلاول بھٹو زرا اس چیز کو دیکھیں کہ کہیں اُن کو غلط رپورٹس تو پیش نہیں کی جارہی اور وہ اصل مجرمان کے خلاف کارروائی کریں۔

کامران ٹیسوری کا کہنا تھا کہ اس معاملے پر کسی کو سیاست نہیں کرنی چاہیے اور نہ ہی کوئی سیاست کررہا ہے، ہم سب کی خواہش ہے کہ اوٹنی ٹھیک ہوجائے، میں نے متحدہ عرب امارات کے قونصل جنرل سے بھی بات کی اور اسے مکمل علاج کے لیے اپنے خرچ پر وہاں بھجوانے کیلیے بھی تیار ہوں۔

ایک سوال کے جواب میں گورنر سندھ نے کہا کہ میرے یہاں آنے پر شازیہ عطا مری کو جو تکلیف ہوئی اُسے سمجھتا ہوں کیونکہ وہ سانگھڑ سے رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئی ہیں اور انہیں واقعے پر مجھ سے زیادہ تکلیف ہوگی، ہم نے اس بات کا خیال رکھا ہے کہ اوٹنی کو عیادت کی وجہ سے پریشانی نہ ہو۔

گورنر سندھ نے ایک سوال کے جواب میں معاشرے کی بگڑتی صورت حال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ میں جب یہاں آرہا تھا تو مجھے منع کیا گیا، جس پر میں نے کہا کہ اگر اوٹنی کی وجہ سے گورنر شپ جاتی ہے تو ابھی چلی جائے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔