بجٹ میں ٹیکسز اور مہنگی بجلی کیخلاف کاٹن جنرز کی ملک گیر ہڑتال

ویب ڈیسک  پير 24 جون 2024
مطالبات کی منظوری تک کاٹن جنرز نے کپاس کی خریداری اور روئی کی فروخت معطل کردی

مطالبات کی منظوری تک کاٹن جنرز نے کپاس کی خریداری اور روئی کی فروخت معطل کردی

 لاہور: وفاقی بجٹ میں ٹیکسز اور بجلی کے نرخوں میں ریکارڈ اضافے کے خلاف کاٹن جنرز نے ملک گیر ہڑتال کردی۔

چیئرمین کاٹن جنرز فورم احسان الحق نے بتایا کہ ہڑتال کا فیصلہ کاٹن جنرز کے ایک ہنگامی جنرل باڈی اجلاس میں کیا گیا، مطالبات کی منظوری تک کاٹن جنرز کپاس کی خریداری اور روئی کی فروخت معطل رکھیں گے۔

کپاس کی خریداری اور روئی کی فروخت معطل ہونے سے ملکی برآمدات شدید متاثر ہو سکتی ہیں۔ گندم انتہائی کم نرخوں پر فروخت ہونے کے بعد کسانوں کو اب کپاس کی فروخت میں بھی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

جننگ انڈسٹری پر اس وقت 82 فیصد جی ایس ٹی عائد ہے۔ بجلی کے فکسڈ چارجز میں ماہانہ تقریبا چھ لاکھ روپے کا اضافہ کیا گیا ہے جو بند فیکٹریوں کو بھی دینا ہو گا۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔