لاہور میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی، ای چالان نادہندگان کے خلاف گھیرا تنگ

ویب ڈیسک  منگل 25 جون 2024
سی ٹی او لاہور نے کہا کہہ نادہندہ مالکان کو سہولیات فراہم نہیں ہوں گی—فوٹو: ٹریفک پولیس

سی ٹی او لاہور نے کہا کہہ نادہندہ مالکان کو سہولیات فراہم نہیں ہوں گی—فوٹو: ٹریفک پولیس

 لاہور: ٹریفک پولیس نے قوانین کی خلاف ورزی پر ہونے والے ای چالان نادہندگان کے خلاف گھیرا تنگ کرتے ہوئے متعدد گاڑیاں پکڑ لی۔

لاہور ٹریفک پولیس کے مطابق49،41،42،32  بار ای چلان والی متعدد گاڑیاں پکڑی گئی ہیں اور بیشتر مالکان نے موقع پر جرمانہ جمع کروا دیا اور متعدد کے کاغذات قبضہ میں لے لیے گئے ہیں۔

سی ٹی او عمارہ اطہر نے بتایا کہ مال روڈ، جیل روڈ، مین بلیوارڈ گلبرگ، فیروز پور روڈ، وحدت روڈ سمیت اہم شاہراہوں پر ٹیمیں موجود ہیں لیکن ای چالان نادہندہ گاڑیوں کے مالکان پولیس سروسز حاصل نہیں کرسکیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ای چالان نادہندہ ہونے کی صورت میں ڈرائیونگ لائسنس،کریکٹر سرٹیفکیٹ، ویری فیکشن اور دیگر 14 سہولیات میسر نہیں ہوں گی، سیف سٹی پنجاب اور پولیس خدمت مراکز، ڈرائیونگ لائسنس ایشوینس مینجمنٹ سسٹم کو انٹیگریڈ کر دیا گیا ہے۔

عمارہ اطہر کا کہنا تھا کہ ٹریفک سگنل، لین لائن، دھواں چھوڑنے، ون وے ٹریفک سمیت متعدد خلاف ورزیوں پر ای چالان کیے جارہے ہیں، ای چالان سے بچنے کیلئے گاڑیوں کی نمبر پلیٹس سے چھیڑ چھاڑ کرنے والوں کےخلاف بھی کریک ڈاؤن اور گاڑی کی نمبر پلیٹس پر کالے پیر اور ہندسے غیر واضح کرنے والوں کے خلاف بھی کارروائی کا حکم دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ منظم ٹریفک کےلیے شہریوں کو ٹریفک قوانین کا احترام کرنا ہوگا، کیمروں کی مدد سے ٹریفک لوڈ مینجمنٹ، مانیٹرنگ اور سرویلنس یقینی بنایا جا رہا ہے۔

سی ٹی او عمارہ اطہر کا کہنا تھا کہ تجاوزات، ٹریفک میں خلل اور دیگر روڈ بلاکنگ کی صورت میں فوری معطل کرتے ہوئے ٹریفک کلئیر رکھا جائے، بہترین ٹریفک مینجمنٹ کے لیے سیف سٹی سے زیادہ سے زیادہ استفاده کیا جا رہا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔