اولمپک گیمز سے قبل فرانسیسی ہوائی اڈوں کی مزدور یونینز کا ہڑتال کا اعلان

ویب ڈیسک  منگل 9 جولائی 2024
(فوٹو: انٹرنیٹ)

(فوٹو: انٹرنیٹ)

پیرس: فرانسیسی ہوائی اڈوں کی مزدور یونینز نے بونس کے تنازع پر پیرس اولمپک گیمز سے قبل ہڑتال کا اعلان کر دیا ہے۔

سی جی ٹی، سی ایف ڈی ٹی، ایف او اور یو این ایس اے نامی یونینوں نے پیرس گیمز کے آغاز سے نو دن قبل 17 جولائی کو ہڑتال کا اعلان کیا ہے تاکہ تمام عملے کو اولمپکس بونس ملنے کا مطالبہ کیا جا سکے۔

پیرس کے اہم ہوائی اڈوں چارلس ڈی گال اور اورلی کو چلانے والے سرکاری گروپ اے ڈی پی کی یونینوں نے اس سے قبل 19 مئی کو ہڑتال کی کال دی تھی، جس سے فلائٹ آپریشن میں خلل نہیں پڑا تھا۔

یہ دونوں ہوائی اڈے اولمپکس میں شرکت کرنے والے غیر ملکی سیاحوں کے لیے فرانس کا مرکزی گیٹ وے ہوں گے، کھیلوں کے دوران روزانہ ساڑھے تین لاکھ افراد کے ساتھ ساتھ زیادہ تر ایتھلیٹس اور ان کا سامان فرانس میں داخل ہونے کی توقع ہے۔

توقع ہے کہ 18 جولائی سے ہزاروں ایتھلیٹس کی آمد شروع ہو جائے گی، جب ایتھلیٹس کا اولمپک ولیج کھل جائے گا، غیر ملکی سیاحوں کی سہولت کے لیے چارلس ڈی گال ایئرپورٹ میں ایک نیا عارضی اوور سائز بیگیج ٹرمینل تیار کیا گیا ہے۔

فرانس میں سرکاری شعبے میں مزدوروں کی نمائندگی کرنے والی یونینوں نے 26 جولائی سے 11 اگست تک ہونے والے پیرس اولمپک گیمز میں کام کرنے کے لیے اضافی تنخواہ یا مدد کا مطالبہ کیا ہے۔

پولیس، ایئر ٹریفک کنٹرولر، کچرا جمع کرنے والے، مرکزی حکومت کے ملازمین، میٹرو اور ٹرین ڈرائیوروں کے ساتھ ساتھ فائر فائٹرز سبھی نے مطالبات کیے ہیں، اور ان کے آجروں پر دباؤ ہے کہ وہ خلل سے بچنے کے لئے ہتھیار ڈال دیں۔

اولمپک گیمز کے تمغے تیار کرنے والے نیشنل ٹکسال کے ملازمین بھی ہڑتال پر ہیں لیکن انتظامیہ کا کہنا ہے کہ پیداوار متاثر نہیں ہوئی ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔