جسٹس (ر) خلیل الرحمان رمدے نے عمران خان کو ہتک عزت کا نوٹس بھجوادیا

ویب ڈیسک  ہفتہ 4 اکتوبر 2014
عمران خان نے 14 روز میں الزامات پرغیر مشروط معافی نہ مانگی تو ان کے خلاف قانونی چارہ جوئی کی جائے گی، نوٹس کا متن.  فوٹو؛فائل

عمران خان نے 14 روز میں الزامات پرغیر مشروط معافی نہ مانگی تو ان کے خلاف قانونی چارہ جوئی کی جائے گی، نوٹس کا متن. فوٹو؛فائل

اسلام آباد: سپریم کورٹ کے سابق جج جسٹس ریٹائرڈ خلیل الرحمان رمدے نے چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کو ہتک عزت کا قانونی نوٹس بھجوا دیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق تحریک انصاف کے سربراہ کو سابق سپریم کورٹ کے جج کی جانب سے بھجوائے گئے نوٹس کے متن میں کہا گیا ہے کہ عمران خان نے انتخابی دھاندلی سے متعلق ان پر بے بنیاد الزامات لگائے، عمران خان نے جس وقت ان پر الزامات لگائے اس وقت وہ لندن میں تھے اس لئے وہ فوری طور پر انہیں نوٹس نہیں بھجوا سکے تاہم اب وہ وطن واپس آگئے ہیں اس لئے انہوں نے قانونی نوٹس بھجوایا ہے۔ نوٹس میں مزید کہا گیا ہے کہ اگر عمران خان نے 14 روز میں ان پر لگائے گئے الزامات پر غیر مشروط معافی نہ مانگی تو وہ ان کے خلاف قانونی چارہ جوئی کریں گے۔

واضح رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے 11 اگست کو سپریم کورٹ کے سابق جسٹس (ر) خلیل الرحمان رمدے پر الزام لگایا تھا کہ انہوں نے مسلم لیگ (ن) کو کامیاب کرانے کے لئے انتخابات میں دھاندلی کارئی تھی جبکہ اس سے قبل سابق چیف جسٹس آف پاکستان افتخار محمد چوہدری اور قائد حزب اختلاف سید خورشید شاہ بھی عمران خان کو ہتک عزت کے نوٹسز بھجوا چکے ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔