ہفتے میں 3 دن کام اور باقی دن آرام کیا جائے، دنیا کے امیر ترین شخص کی تجویز

ویب ڈیسک  جمعرات 9 اکتوبر 2014
کارلس سلم اس وقت 83 ارب ڈالر کے مالک ہے اور انہوں نے دنیاکے امیر ترین شخص ہونے کا تاج مائیکروسوفٹ کے موجد بل گیٹس سے چھینا

کارلس سلم اس وقت 83 ارب ڈالر کے مالک ہے اور انہوں نے دنیاکے امیر ترین شخص ہونے کا تاج مائیکروسوفٹ کے موجد بل گیٹس سے چھینا

نیو یارک: زیادہ چھٹیاں اور کم کام کس کا شوق نہیں تو جناب دنیا کے امیر ترین شخص نے ایسے لوگوں کی خواہش کو سامنے رکھتے ہوئے تجویز پیش کی ہے کہ ہفتے کےدوران کام کرنے کے لیے صرف 3 دن رکھے جائیں باقی دن لوگ تفریح کریں اور اپنے خاندان کےساتھ گزاریں اس سے زندگی زیادہ بہتر ہوجائے گی۔

امریکی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کارلس سلم کا کہنا تھا کہ انہیں یقین ہے کہ ایسا ممکن ہے کیوں کہ صرف مشینیں ہی  24 گھنٹے کام کرسکتی ہیں  تاہم لوگ اس بات کے مستحق ہیں کہ انہیں تفریح، اپنی فیملی اور مزید جاب ٹریننگ کے لیے وقت ملنا چاہئے جس سے ان کی کارگردگی میں بہتری آئے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ اس تبدیلی سے نہ صرف نوجوانوں کوورک فورس کا حصہ بنانے کے مواقع پیدا ہوں گے بلکہ معیشت پر بھی اس کے مثبت اثرات مرتب ہوں گے،یہ علم رکھنے والوں اور تجربہ کاروں کا دور ہے اور جب انسان 60 سال سے اوپر جاتا ہے تو اس کے پاس زیادہ علم اور تجربہ آجاتا ہے۔

کارلس سلم کا کہنا تھا کہ ہفتے میں 3 دن کام کرنے سے آپ کے پاس اپنے لیے زیادہ وقت دستیاب ہوگا اور آپ کو اس کے لیے ریٹائرڈ ہونے کا انتظارنہیں کرنا پڑے گا، سلم کی تجویز کے مطابق لوگ دن بھر میں 11 گھنٹے کام کریں جبکہ ریٹائرمنٹ کی عمر 60 سال سے بڑھا کر 75 سال کردی جائے۔

واضح رہے کہ کارلس سلم اس وقت 83 ارب ڈالر کے مالک ہیں اور انہوں نے دنیاکے امیر ترین شخص ہونے کا تاج مائیکروسوفٹ کے موجد بل گیٹس سے چھینا ۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔