ٹینکرزمالکان ہڑتال، غذائی بحران کاخدشہ ہے، پی وی ایم اے

خبر ایجنسیاں  جمعـء 19 اکتوبر 2012
ہم بلیک میلنگ کا شکار ہیں، حکومت صورتحال کا نوٹس لے، عاطف اکرام شیخ  فوٹو فائل

ہم بلیک میلنگ کا شکار ہیں، حکومت صورتحال کا نوٹس لے، عاطف اکرام شیخ فوٹو فائل

اسلام آ باد: پاکستان وناسپتی مینوفیکچررز ایسوسی ایشن(پی وی ایم اے) نے کہاہے کہ کراچی میں خوردنی آئل ٹینکرزایسوسی ایشن کی پرتشدد ہڑتال کے باعث صنعتی سرگرمیاں مفلوج ہوکررہ گئی ہیں اور ملک غذائی عدم تحفظ کی جانب بڑھ رہا ہے۔

ٹینکرزایسوسی ایشن نے 15 روزسے ہڑتال کر رکھی ہے جس کے باعث اندرون ملک خوردنی تیل کی ترسیل بری طرح متاثر ہو رہی ہے اورٹینکرزمالکان کا یہ اقدام کسی بھی طرح منصفانہ نہیں ہے۔ ان خیالات کا اظہار پی وی ایم اے کے قائم مقام چیئرمین عاطف اکرام شیخ نے ایف پی سی سی آئی کے اسلام آبادآفس میں صنعتکاروںسے گفتگوکرتے ہوئے کیا ۔ عاطف اکرام شیخ کہاکہ عالمی مارکیٹس میںخوردنی تیل کی قیمتیں کم ہو رہی ہیںجبکہ پاکستان میں سپلائی چین میں خلل کے باعث صورتحال اس کے بالکل برعکس ہے۔ انھوںنے کہاکہ 99 آئل ریفائننگ یونٹ خام مال کی عدم دستیابی کے باعث بندہوچکے ہیں۔

جس کے باعث براہ راست 50 ہزار افراد کا روزگارختم ہواجبکہ حکومت کومحاصل کی مدمیں یومیہ 600 ملین روپے کانقصان الگ ہورہاہے۔ عاطف اکرام شیخ نے کہاکہ کئی مواقع پرآئل ٹینکرزماکان نے پرتشدداحتجاج کیااوراب تک دوسرے ٹرانسپورٹرزکی حوصلہ شکنی کرنے کیلیے ہڑتال کے دوران 6آئل ٹینکرزنذرآتش کیے جاچکے ہیںجن کی قیمت 60 ملین روپے ہے۔

انھوں نے کہاکہ احتجاج سب کاحق ہے تاہم موجودہ صورتحال میں مجرمانہ سرگرمیاںناقابل برداشت ہیں، گھی انڈسٹری ان استحصال پسندوں کے کنٹرول میں ہے جوغیرمنصفانہ منافع کمانے کیلیے ہرحربے کو جائز تصورکرتے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ ہم بلیک میلنگ، تفریق،کارگولٹیروں اور فریٹ نرخوں میں ناجائز اضافے کاشکارہیں لہذاحکومت بزنس کمیونٹی کو تحفظ فراہم کہیں ایسا نہ ہوکہ اس صورتحال کے باعث صنعتی نمو جمود کا شکار ہو جائے۔ انھوں نے کہاکہ اعلیٰ حکام اورمتعلقہ ادارے سپلائی چین کو برقرار رکھنے اورصنعتی ومعاشی نقصان سے بچنے کیلیے ایکشن لیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔