فیمٹولیز ر سرجری کے ذریعے چشمے سےنجات مل سکتی ہے، ماہرین چشم

اسٹاف رپورٹر  بدھ 7 نومبر 2012
 کراچی سمیت ملک میں بڑھتی آلودگی ،دھول ،مٹی سمیت دیگر وجوہات سے آنکھوں کے امراض میں اضافہ ہورہاہے،ڈاکٹر قاضی واثق . فائل فوٹو

کراچی سمیت ملک میں بڑھتی آلودگی ،دھول ،مٹی سمیت دیگر وجوہات سے آنکھوں کے امراض میں اضافہ ہورہاہے،ڈاکٹر قاضی واثق . فائل فوٹو

کراچی: طبی ماہرین نے کہاہے کہ اب ملک میں پہلی بارفیمٹو لیزرسرجری کے ذریعے چشمے لگانے والے افراد کو چشموں سے نجات مل سکے گی۔

یہ بات منگل کو ماہر امراض چشم ڈاکٹر شریف ہاشمانی نے ہاشمانی اسپتال میں براہ راست سرجری کرنے کے بعد مقامی ہوٹل میں منعقدہ سیمینار سے خطاب میں کہی، انھوںنے کہا کہ ملک بھر میں لاکھوں افراد آنکھوںکے مختلف امراض میں مبتلا ہیں جن کو فوری علاج کرانے کی ضرورت ہے ،عوام کو چاہیے کہ وہ فوری تشخیص کرائیںتاکہ فوری علاج ممکن ہوسکے،ملک میں آنکھوںکے امراض میں مبتلا افراد میں سے3 فیصد مریضوںکوفیمٹو لیزر سرجری کی ضرورت پڑتی ہے جوکہ اب ملک میں پہلی بار ہاشمانی اسپتال نے متعارف کرائی ہے۔

آپتھالوجی سوسائٹی کے جنرل سیکریٹری ڈاکٹر قاضی واثق نے کہا کہ یہ پروگرام کالج آف فزیشن اینڈ سرجن کی گولڈن جوبلی کے حوالے سے منعقد کیا گیاہے، انھوںنے کہاکہ کراچی سمیت ملک بھرمیں بڑھتی آلودگی ،دھول ،مٹی سمیت دیگر وجوہات کی وجہ سے آنکھوں کے امراض میں اضافہ ہورہاہے، ایک سوال کے جواب میں انھوںنے کہاکہ تشویشناک بات ہے کہ اب چھوٹے بچوں کو چشمے لگانے کی ضرورت پڑرہی ہے جوکہ والدین اور خود بچوں کے لیے پریشانی کا باعث ہے، انھوں نے کہا جو افراد چشمے لگاتے ہیں۔

اب فیمٹو لیزر سرجری کے ذریعے اس سے نجات حاصل کرسکتے ہیں، اس دوران کالج آف فزیشن اینڈ سرجن پاکستان کے صدر ظفر اللہ چوہدری نے فیمٹو لیزر سرجری ملک میں پہلی بار متعارف کرانے پر ہاشمانی اسپتال کا شکریہ ادا کیا اور کہاکہ اس سرجری سے اب ملکی عوام کو بے حد فائدہ پہنچے گا، ان کا مزید کہنا تھاکہ سرجری کو کراچی کے تمام اسپتالوں میں متعارف کرایا جائے تاکہ مریضوں کو بہتر فوائد مل سکیں، اس موقع پرکراچی بھر کے اسپتالوں کے شعبہ آپتھالوجی سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹروں نے بھی شرکت کی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔