لاہورپولیس جلاد بن گئی، زیرحراست 2 افراد پرانسانیت سوز تشدد

ویب ڈیسک  پير 9 مئ 2016
حکام نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے 4 اہلکاروں کو معطل کردیا جن میں انچارج انویسٹی گیشن اوراے ایس آئی بھی شامل ہیں۔   فوٹو:ایکسپریس نیوز

حکام نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے 4 اہلکاروں کو معطل کردیا جن میں انچارج انویسٹی گیشن اوراے ایس آئی بھی شامل ہیں۔ فوٹو:ایکسپریس نیوز

 لاہور: تھانہ شالیمار پولیس کے تفتیشی اہلکار 2 افراد کو الٹکا لٹکا کر ان پر بہیمانہ تشدد کرتے رہے اور جب ایکسپریس نیوز نے معاملے کو اٹھایا تو اعلی پولیس حکام نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے 4 اہلکاروں کو معطل کردیا۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق لاہور کے تھانہ شالیمار پولیس نے 6 روز قبل 2 افراد کو حراست میں لیا جس کے بعد انہیں انسانیت سوز تشدد کا نشانہ بناتے رہے، تفتیشی ٹیم کے اہلکار دونوں افراد کو چارپائی سے باندھ کر الٹا لٹکا کر ان پر ڈنڈے برساتے رہے جب کہ دونوں افراد کو برہنہ کرکے ان کی چھترول بھی کی گئی اور جب ان کی حالت غیر ہونے لگی تو انہیں قریبی اسپتال منتقل کردیا۔

دوسری جانب پولیس کے وحشیانہ تشدد کی خبر ایکسپریس نیوز پر چلنے کے بعد اعلی پولیس حکام نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے 4 اہلکاروں کو معطل کردیا جن میں انچارج انویسٹی گیشن حماد بٹ اور اے ایس آئی طارق بھی شامل ہیں۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔