سعودی عرب میں دہشت گردی کے الزام میں 14 افراد کو سزائے موت سنادی گئی

ویب ڈیسک  بدھ 1 جون 2016
پھانسی کی سزا پانے والے افراد سیکیورٹی اہلکاروں قتل میں ملوث ہیں، سعودی حکام، فوٹو؛ فائل

پھانسی کی سزا پانے والے افراد سیکیورٹی اہلکاروں قتل میں ملوث ہیں، سعودی حکام، فوٹو؛ فائل

ریاض: سعودی عرب میں دہشت گردی کے الزام میں 14 افراد کو پھانسی کی سزا سنادی گئی جب کہ دیگر 9 افراد کو ملک کا امن و امان خراب کرنے جرم میں قید کی سزا دی گئی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق سعودی عدالت نے دہشت گردی کے الزام میں 14 افراد کو سزائے موت جب کہ دیگر 9 افراد کو 3 سے 15 سال کے درمیان قید کی سزاسنائی ہے۔ سعودی حکام کا کہنا ہے کہ پھانسی کی سزا پانے والے افراد ملک میں سیکیورٹی اہلکاروں کے قتل میں ملوث ہیں جب کہ دیگر افراد کو ملک میں افرا تفری اور لوگوں کو لوٹنے کے جرم میں قیر کی سزا دی گئی تاہم ان افراد کی شناخت ظاہر نہیں کی گئی ہے۔

واضح رہے کہ ان تمام افراد کو کچھ سال قبل سعودی عرب کے مغربی صوبے میں مظاہرے کے دوران گرفتار کیا گیا تھا جہاں سیکیورٹی اہلکاروں سے جھڑپوں کے دوران 20 مظاہرین سمیت متعدد پولیس اہلکار ہلاک ہوئے تھے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔