برطانیہ میں طوفانی بارشوں سے 2 افراد ہلاک، کئی علاقے زیر آب

ویب ڈیسک  پير 26 نومبر 2012
انتظامیہ کے حکام کے مطابق سیلابی ریلوں سے 800 سے زائد گھر مکمل طور پر تباہ ہو گئے ہیں۔  فوٹو: رائٹرز

انتظامیہ کے حکام کے مطابق سیلابی ریلوں سے 800 سے زائد گھر مکمل طور پر تباہ ہو گئے ہیں۔ فوٹو: رائٹرز

انگلینڈ: برطانیہ میں طوفانی بارشوں کے نتیجے میں دو افراد ہلاک، کئی علاقے زیر آب آگئے۔

برطانیہ کے جنوبی علاقے شدید طوفانی بارشوں کی لپیٹ میں ہیں، میڈلینڈز، کارن وال اور ڈیوون کے علاقوں میں ہزاروں لوگ سیلابی ریلوں سے متاثر ہوئے ہیں تاہم کئی علاقوں میں لوگوں کو محفوظ مقامات پر منتقل کیا گیا ہے۔ انتظامیہ حکام کے مطابق سیلابی ریلوں سے 800 سے زائد گھر مکمل طور پر تباہ ہو گئے ہیں، متاثرہ علاقوں میں بجلی اور ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا ہے جبکہ ریل گاڑیوں کی آمدورفت بھی متاثر ہوئی ہے۔

محکمہ موسمیات نے شمالی انگلینڈ اور اسکاٹ لینڈ میں بھی تیز بارشوں کی پیش گوئی کی ہے۔ دریاؤں میں پانی کی سطح خطرناک حد تک تجاوز کر گئی ہے  جس کی وجہ سے حکام نے نشیبی علاقوں کے مکینوں کو محفوظ مقامات پر منتقل کرنے کا عمل شروع کر دیا ہے۔

 دوسری جانب برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون نے متاثرین کو مکمل مدد کے یقین دہانی کراتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت سیلاب زدگان کو مشکل کی گھڑی میں تنہا نہیں چھوڑے گی۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔