پاناماکیس کا فیصلہ نوازشریف کے حق میں نہیں ہوگا، اعتزاز احسن

ویب ڈیسک  منگل 31 جنوری 2017
اسحاق ڈار منی لانڈرنگ سے متعلق اپنے بیان سے منحرف ہوئے تو جیل جائیں گے، رہنما پیپلزپارٹی۔ فوٹو؛ فائل

اسحاق ڈار منی لانڈرنگ سے متعلق اپنے بیان سے منحرف ہوئے تو جیل جائیں گے، رہنما پیپلزپارٹی۔ فوٹو؛ فائل

اسلام آباد: سینیٹ  میں قائد حزب اختلاف اعتزاز احسن کا کہنا ہے کہ پاناماکیس کا فیصلہ نوازشریف کے حق میں نہیں ہوگا جب کہ اسحاق ڈار اپنے بیان سے منحرف ہوئے تو جیل جائیں گے۔  

لاہور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے  اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ پہلے دن سے مسلم لیگ (ن) والے کہہ رہے ہیں فلیٹس حسین نواز کی ملکیت ہیں جب کہ وزیراعظم اور حسین نواز نے بھی تسلیم کیا کہ پراپرٹی شریف خاندان کی ہے، ٹیکس کے کاغذات میں قطری خط اور کاغذات نہیں دکھائے گئے۔ انہوں نے کہا کہ پاناماکیس کا فیصلہ نوازشریف کے حق میں نہیں ہوگا اور جو سمجھتا ہے پاناما کیس کا فیصلہ نوازشریف کے حق میں ہوگا وہ ان کی خام خیالی ہے۔

اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ اثاثے تسلیم کیے جاچکے ہیں تو ثابت کریں کہ یہ جائز آمدن سے حاصل کیے گئے لیکن یہ کہتے ہیں کہ ہمارے پاس رکارڈ نہیں اور نہ کوئی بینک اکاونٹ ہے تو کیا بوریوں میں درہم اور ڈالر جاتے رہے اور یہ زمین میں دفن کرتے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیرخزانہ اسحاق ڈار اپنے بیان سے منحرف ہوئے تو جیل جائیں گے جب کہ الیکشن دھاندلی کیس میں بھی نوازشریف کو رعایت دی گئی۔

واضح رہے پاناما کیس کی سماعت کے دوران نیب نے سپریم کورٹ میں حدیبیہ پیپر مل ریفرنس میں اسحاق ڈار کی معافی کا ریکارڈ پیش کیا ہے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔