گورنر ایس بی پی کے نام سے جعلی ای میل زیرگردش

بزنس رپورٹر  بدھ 22 فروری 2017
کوئی ای میل نہیں کی، کارروائی کیلیے درخواست ایف آئی اے کو دیدی،عوام کوانتباہ۔ فوٹو: فائل

کوئی ای میل نہیں کی، کارروائی کیلیے درخواست ایف آئی اے کو دیدی،عوام کوانتباہ۔ فوٹو: فائل

کراچی: اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے عوام کو مطلع کیا ہے کہ دھوکہ باز عناصر گورنر اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے نام سے بنائے گئے جعلی ای میل کے ذریعے بھاری رقوم موصول ہونے کی گمراہ کن اطلاعات پھیلارہے ہیں۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق ایک جعلی ای میل پتا گورنر اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے نام سے بنایا گیا ہے اور اس پتے سے جعلی ای میل گردش کر رہی ہے جس میں بتایا جاتا ہے کہ ای میل کے وصول کنندہ کو کسی غیرملکی حکومت سے بھاری مالیت کی رقم موصول ہوئی ہے، جن لوگوں کو یہ ای میل ملی ان میں سے بعض یہ معاملہ اسٹیٹ بینک کے علم میں لائے ہیں۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق عوامی مفاد میں واضح کیاجاتا ہے کہ گورنر ایس بی پی، ان کے دفتر یا اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے ایسی کوئی ای میل جاری نہیں کی، یہ عوام کو دھوکہ دینے اور ادارے کو بدنام کرنے کی کوشش ہے، اسٹیٹ بینک نے ان کوششوں کے پسِ پردہ شرپسند عناصر کے خلاف قانونی چارہ جوئی کے لیے ایک درخواست کراچی میں ایف آئی اے حکام کو دے دی ہے۔

 

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔