مقبوضہ کشمیر: بھارتی یوم جمہوریہ کی آمد، وادی میںمظالم بڑھ گئے

اے پی پی  پير 21 جنوری 2013
کشیدگی پر تشویش،جنگی جنون کو ہوا دینے پر بھارتی ذرائع ابلاغ پر تنقید، 26جنوری کو ہڑتال ہوگی، حریت کانفرنس کا اعلان. فوٹو: اے ایف پی/ فائل

کشیدگی پر تشویش،جنگی جنون کو ہوا دینے پر بھارتی ذرائع ابلاغ پر تنقید، 26جنوری کو ہڑتال ہوگی، حریت کانفرنس کا اعلان. فوٹو: اے ایف پی/ فائل

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں 26جنوری کو بھارتی یوم جمہوریہ کی تقریبات کے سلسلے میں سیکیورٹی سخت کر دی گئی ہے اور بے گنا ہ کشمیری نوجوانوں کی گرفتاریوںاور تلاشیوں کا سلسلہ تیز کر دیا گیا ہے ۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ وادی میں پولیس اور فوج کا گشت بڑھادیا گیا ہے اور مختلف مقامات پر اضافی چوکیاں اور ناکے قائم کیے گئے ہیں۔جیلوں سے رہائی پانے والے بے گناہ کشمیریوںکو ہر روز مقامی پولیس اسٹیشن میں حاضری پر مجبور کیا جارہا ہے اور لوگوں کو گرفتار کیا جا رہا ہے۔ سری نگر شہر اور دیگر قصبوں میںمختلف مقامات پر خفیہ کیمروں سے نگرانی کی جارہی ہے۔

26جنوری کو بڑی سرکاری تقریب کے مقام سری نگر کے بخشی اسٹیڈیم اور مضافاتی علاقوں میں فوج کا پہرہ سخت کر دیا گیا ہے۔دوسری جانب سماجی رابطے کی ویب سائیٹ یو ٹیوب پر ایک نئی وڈیو میں مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی پولیس کا ظلم و تشدددکھایا گیاہے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سوا 2 منٹ دورانیے کی وڈیو میں ضلع بارہ مولہ میں12پولیس اہلکار 2 لڑکوں کو برہنہ کر کے بدترین تشدد کا نشانہ بنار ہے ہیں جبکہ ان کا افسر کرسی پر براجمان ہے۔ اب تک ویب سائیٹ پر 2ہزا رسے زائد مرتبہ یہ وڈیو دیکھی جاچکی ہے ۔

6

ٹویٹر استعمال کرنے والے افراد نے یہ وڈیو کٹھ پتلی وزیراعلیٰ عمر عبداللہ کو بھی بھجوائی ہے تاکہ ان کا ردعمل جانا جاسکے۔ادھر پولیس کے ایک ترجمان نے سری نگر میں میڈیا کو بتایا کہ اس سلسلے میں ایف آئی آر درج کرلی گئی ہے۔جموںو کشمیر لبریشن فرنٹ نے کشمیری نظربندو ں کو عمرقید کی سزا کے خلاف اور ان کی حالت زار کو اجاگر کرنے کیلیے ہر ماہ20تاریخ کو مشعل بردار جلوس اور احتجاجی دھرنا دینے کا فیصلہ کیا ہے۔کل جماعتی حریت کانفرنس نے کنٹرول لائن پر بھارت ا ور پاکستان کے درمیان پائی جانے والی کشیدگی پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے ۔

حریت کانفرنس کی ایگزیکٹو کونسل نے اپنے ایک اجلاس میں بھارت اور پاکستان پر زور دیا ہے کہ وہ کشیدگی کم کرنے کے لیے بنیادی مسائل کے حل کی طرف فوری توجہ دیں۔اجلاس کی صدارت کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین میر واعظ عمر فاروق نے کی ۔اجلاس میںبعض بھارتی ذرائع ابلاغ کی طرف سے ایک نہایت ہی نازک اور حساس مرحلے پر جنگی جنون کو ہوا دینے پر اسے تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے۔ اجلاس میں 26جنوری کویوم جمہوریہ کے موقع پر عوام سے مکمل ہڑتال کی اپیل کرتے ہوئے زور دیاگیا کہ عوام اس روز اپنے پھر پور احتجاج سے عالمی برادری پر واضح کریں کہ کشمیری عوام کے ساتھ کیے گئے وعدوںکو پورا کیا جائے۔

ایکسپریس میڈیا گروپ اور اس کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں۔